The news is by your side.

Advertisement

پنجاب میں ذخیرہ اندوزوں کیخلاف سخت کارروائی کیلئے آرڈینس جاری

لاہور :پنجاب میں ذخیرہ اندوزوں کے خلاف سخت کارروائی کیلئے آرڈینس جاری کردیا، مجرموں کو جرمانہ اور تین سال کی سزا جبکہ اطلاع دینے والے کو برآمد ہونے والے سامان کی کل رقم کا دس فیصد انعام میں دیا جائے گا۔

تفصیلات کے مطابق کورونا وائرس کی وبا کے دوران ذخیرہ اندوزی کی حوصلہ شکنی کرنے کے لئے پنجاب حکومت کی جانب سے سخت اقدامات اٹھائے جارہے ہیں، اس سلسلے میں ذخیرہ اندوزوں کیخلاف سخت کارروائی کیلئےآرڈیننس جاری کردیا۔

جس کے تحت ذخیرہ اندوزوں کوجرمانہ اور 3سال کی سزا دی جائے گی جبکہ قبضہ میں لئے گئے سامان کو بحق سرکار ضبط کرکے نیلام کیا جائے گا۔

آرڈیننس کے مطابق تمام ڈپٹی کمشنرز کو ذخیرہ اندوزوں کے اسٹاک چیک کرنے کا اختیار دے دیا گیا ہے اور آرڈینس فوری طور پر پورے صوبے پر لاگو ہوگا۔

آرڈیننس میں کہا گیا ذخیرہ اندوز پر ذخیرہ کئےگئے سامان کی نصف قیمت کےبرابرجرمانہ دینا ہوگا اور گودام کو چیک کرنے کیلئےوارنٹ کی ضرورت نہیں ہو گی جبکہ ذخیرہ اندوزی کی اطلاع دینے والے کو سامان کی رقم کا 10فیصد بطور انعام دیا جائے گا۔

گذشتہ روز خیبرپختونخوا میں ذخیرہ اندوزی اور منافع خوری کی روک تھام کے لیے آرڈیننس جاری کیا تھا،  وزیرقانون سلطان محمد خان کا کہنا تھا کہ  ذخیرہ اندوزوں کے خلاف ڈپٹی کمشنرز کو اختیارات دے دیئے گئے، بغیروارنٹ گرفتاری اورتلاشی لےسکیں گے،ملزمان کی ضمانت نہیں ہوگی، تین سال کی سزا اورجرمانہ دینا ہوگا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں