The news is by your side.

Advertisement

مودی کا کشمیر پر اے پی سی ڈراما ناکام، کٹھ پتلی رہنماؤں نے بھی وادی کی خصوصی حیثیت پر زبان کھول دی

نئی دہلی: مودی کا مخصوص کشمیری رہنماؤں پر مشتمل اے پی سی کا ڈراما ساڑھے تین گھنٹے بعد ختم ہو گیا، مقبوضہ کشمیر کے نام پر دنیا کو بے وقوف بنانے کی بھارتی وزیر اعظم کی کوشش ایک بار پھر ناکام ہو گئی۔

تفصیلات کے مطابق بھارتی وزیر اعظم نریندر مودی نے آج کشمیریوں کے خلاف ایک اور چال چلی، کشمیری رہنماؤں کے ساتھ مودی کا نئی دہلی میں آل پارٹیز کانفرنس کا ڈراما ساڑھے تین گھنٹے بعد ناکامی سے دوچار ہو گیا۔

مودی نے بھارت نواز کشمیری لیڈرز کو شیشے میں اُتارنے کی کوشش کی، 14 جماعتوں کے رہنما اے پی سی میٹنگ میں شریک ہوئے، جب کہ کشمیریوں کا مقدمہ لڑنے والے حریت رہنماؤں کو مدعو ہی نہیں کیا گیا، نیز میٹنگ کا کوئی ایجنڈا بھی نہیں تھا۔

بھارتی ٹی وی نے خود بھانڈا پھوڑا کہ مودی نے مقبوضہ کشمیر کے مخصوص رہنماؤں سے ملاقات کی، ٹی وی نے رپورٹ کیا کہ حریت رہنماؤں نے مودی کی ملاقات کو تھیٹر ڈراما قرار دے دیا، انھوں نے کہا اے پی سی سازش ہے ہم مسترد کرتے ہیں۔

ادھر مودی سے ملاقات کے بعد بھارت نواز کشمیری رہنماؤں نے بھی میڈیا سےگفتگو میں کہا ہم نے مودی کو واضح کر دیا کہ کشمیر کی پرانی آئینی 5 اگست 2019 سے پہلے کی خصوصی حیثیت بحال کی جائے، پہلی والی خصوصی حیثیت کو بحال کرنا ہی ہوگا۔

خیال رہے کہ نئی دہلی میں کشمیر پر آج بلائی گئی اے پی سی کے موقع پر مودی سرکار نے مقبوضہ وادی کو چھاؤنی میں تبدیل کر دیا ہے، جگہ جگہ ناکے لگا کر انٹرنیٹ سروس بھی بند کی جا چکی ہے، ٹرین سروس معطل ہے، پوری وادی میں ہائی الرٹ ہے۔

ادھر اس اے پی سی کے حوالے سے بھارت کے اندر سے بھی آوازیں اٹھ رہی ہیں، کانگریس رہنما چدھم برم نے مودی سرکار سے پانچ اگست کےگھناؤنی اقدام کو ختم کرنے کا مطالبہ کیا، مغربی بنگال کی وزیر اعلیٰ ممتا بینرجی نے اے پی سی پر رد عمل میں کہا کشمیر کا خصوصی درجہ ختم کرنے کی ضرورت ہی کیا تھی، پوری قوم مودی کے اس اقدام کی وجہ سے شرمندہ ہوئی۔

کشمیری رہنما یاسین ملک کی اہلیہ مشال ملک بھی بھارتی حکومت پر برس پڑی ہیں، انھوں نے کہا مودی آئے دن نیا ڈراما کرتے ہیں، آج اپنی کٹھ پتلوں کو بلا کر کشمیر پر اے پی سی کا تھیٹر لگایا، یہ سال کا سب سے بڑا مذاق ہے، کیوں کہ کشمیر کے اصل وارث حریت رہنماؤں کو جیلوں میں ٹارچر کیا جا رہا ہے، ڈیتھ سیلز میں رکھا ہوا ہے، کشمیریوں کو گھروں میں یرغمال بنایا ہوا ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں