The news is by your side.

Advertisement

نوکری سے برخاست ہونے والے انسپکٹر کی سپریم کورٹ سے اپیل

اسلام آباد: سپریم کورٹ آف پاکستان نے سندھ پولیس کو نوکری سے برخاست کیے جانے والے سی ٹی ڈی انسپکٹر کے حوالے سے دوبارہ تحقیقات کا حکم دے دیا۔

تفصیلات کے مطابق سپریم کورٹ کراچی رجسٹری میں چیف جسٹس گلزار احمد کی سربراہی میں 3 رکنی بینچ نے نوکری سے برخاست کرنے کے خلاف سی ٹی ڈی انسپکٹر کی اپیل پر سماعت کی۔

عدالت عظمیٰ میں سماعت کے دوران سرکاری وکیل نے دلائل دیتے ہوئے کہا کہ انسپکٹر طارق اسلم کے شہری کو تاوان کی غرض سے اٹھانے کے شواہد ہیں، جس علاقے میں واقعہ ہوا سی ٹی ڈی انسپکٹر وہاں کا انچارج تھا۔

پراسیکیوٹر نے کہا کہ جو اہلکار شہری کو اٹھا کر لائے انسپکٹر کا ان سے رابطہ ثابت ہوتا ہے، شواہد کی بنا پر انسپکٹر طارق اسلم کو نوکری سے برخاست کیا گیا۔

سی ٹی ڈی انسپکٹر نے کہا کہ تحقیقات میں مجھے سنا گیا نہ ہی صفائی کا موقع دیا گیا۔ طارق اسلم نے سپریم کورٹ سے اپیل کی کہ تحقیقات کالعدم کر کے نوکری پر بحال کیا جائے۔

سپریم کورٹ آف پاکستان نے سندھ پولیس کو معاملے کی دوبارہ تحقیقات کا حکم دیا۔

یاد رہے کہ گزشتہ سال یکم اگست کو انسداد دہشت گردی کی عدالت نے دہشت گردی اور دھماکا خیزمواد اور غیر قانونی اسلحہ رکھنے کے جرم میں ملزم کو 14،14 سال قید بامشقت کی سزا سنائی تھی۔

fb-share-icon0
Tweet 20

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں