The news is by your side.

جوڈیشل کمیشن میں ججز کی تعداد اب کتنی ہوگی؟ فیصلہ ہوگیا

اسلام آباد: سینیٹ کمیٹی برائے قانون وانصاف نے جوڈیشل کمیشن میں ججز کی تعداد سے متعلق بڑا فیصلہ کرلیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق آج ہونے والے سینیٹ کمیٹی برائے قانون وانصاف کے اجلاس میں پی پی سینیٹر فاروق نائیک نے مذکورہ تجویز پیش کی، ان کا موقف تھا کہ جب تعداد تین، چار کے تناسب سے ہوگی توتقرر مؤثر انداز میں ہو سکے گا اگر تناسب چھ ، تین ہو تو اجلاس میں ججز کے تقرر کا کوئی فائدہ نہیں ہوگا۔

سینیٹ کمیٹی میں تجویز دی گئی کہ متعلقہ ہائیکورٹ کا سینئر ترین جج ہی اس ہائی کورٹ کا چیف جسٹس مقررکیاجائے گا،ہائیکورٹ میں چیف جسٹس کےتقررکےطریقہ کارپرفاروق نائیک کی تجویزکردہ ترمیم منظور کرلیا گیا، اس سے قبل ہائیکورٹ سینئرترین جج کو چیف جسٹس مقرر کئے جانےکےحوالےآئین خاموش تھا۔

بعد ازاں سینیٹ کمیٹی نے طویل مشاورت کے بعد جوڈیشل کمیشن میں ججز کی تعداد چھ سے کم کر کے چار کرنے کی تجویز کی منظوری دے دی جبکہ عدلیہ میں خالی نشست پرتقرر زیادہ سےزیادہ نوے دن میں تقرر کئےجانےکی ترمیم بھی منظور کی گئی۔

اجلاس میں فاروق ایچ نائیک نے خالی نشست پر تعیناتی ساٹھ دن میں کرنے کی تجویز دی تھی، جس پر وفاقی وزیر قانون نے اعتراض کیا تھا کہ ساٹھ دن کم ہیں نوے دن کردئیے جائیں تو اچھا ہوگا، کمیٹی نے اس تجویز پر اتفاق کرتے ہوئے اس کی منظوری دے دی۔

Comments

یہ بھی پڑھیں