کم عمر پاکستانی آئی ٹی ماہر ارفع کریم رندھاوا کی آج24 ویں سالگرہ
The news is by your side.

Advertisement

کم عمر پاکستانی آئی ٹی ماہر ارفع کریم رندھاوا کی آج 24 ویں سالگرہ

لاہور : انفارمیشن ٹیکنالوجی میں تہلکہ مچانے والی کم عمر پاکستانی آئی ٹی ماہر ارفع کریم رندھاوا کی آج چوبیس ویں سالگرہ منائی جارہی ہے۔ارفع کریم نے کم عمری میں ہی سافٹ وئیر سرٹیفکیٹ حاصل کرکے عالمی شہرت حاصل کی ۔

تفصیلات کے مطابق ارفع کریم 2 فروری 1995 کو صوبہ پنجاب کے شہر فیصل آباد میں پیدا ہوئیں اور صرف 9 برس کی عمر میں دنیا کی کم عمر ترین مائیکرو سافٹ سرٹیفائیڈ کا  اعزازحاصل کرکے پاکستان کو نام روشن کیا۔

سن 2006 میں بار سلونا میں منعقدہ تکنیکی ڈیولپرز کانفرنس میں مائیکرو سافٹ نے  پوری دنیا سے پانچ ہزار سے زیادہ مندوبین میں مدعو کیا ،  جن میں  پاکستان سے صرف ارفع کریم شامل تھیں۔

سن 2015  میں مائیکرو سافٹ کے بانی  بل گیٹس نے ارفع کریم سے خصوصی ملاقات کی اور انھیں مائیکرو سافٹ سرٹیفائیڈ ایپلی کیشن کی سند عطا کی تھی ۔

اس کے علاوہ ارفع کریم نے دبئی کے فلائنگ کلب میں صرف دس سال کی عمر میں طیارہ اڑانے کا سرٹیفیکٹ بھی حاصل کیا ۔

ارفع کو  لازوال کاوش کی بنا پر فاطمہ جناح گولڈ میڈل، سلام پاکستان یوتھ ایوارڈ سمیت دیگراعزازات سے نوازا کیا جبکہ  حکومت پاکستان کی جانب سے ارفع کریم رندھاوا کو حسن کارکردگی کا صدارتی ایوارڈ بھی دیاگیا۔

کم عمر  آئی ٹی کو  22 دسمبر 2011 کو مرگی کا دورہ پڑا ، جس  پرانھیں  لاہور کے اسپتال میں منتقل کیا گیا جہاں وہ کچھ روز کومے میں رہنے کے بعد 14جنوری 2012 کو خالق حقیقی سے جا ملیں۔

جنوری 2012ء میں وزیراعظم سید یوسف رضا گیلانی نے ارفع کے نام پر ڈاک کا یادگاری ٹکٹ جاری کرنے کی منظوری دی‘ جبکہ پنجاب حکومت نے ان کے نام سے لاہور میں ارفع کریم آئی ٹی ٹاور بھی تعمیر کیا۔

شوخ چنچل ارفع آج ہم میں نہیں ہے مگر ارفع کی طرح دیگر کئی کم عمر مائیکروسافٹ پروفیشنلز اس کا مشن جاری رکھنے کے لئے پر عزم ہیں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں