The news is by your side.

Advertisement

صدر مملکت نے مرحوم قرض دار کے حق میں‌ بڑا حکم جاری کر دیا

اسلام آباد: صدر مملکت عارف علوی نے بینک آف پنجاب کو ایک مرحوم قرض دار کے خاندان کو 4 لاکھ 23 ہزار روپے کی واپسی کا حکم دے دیا۔

تفصیلات کے مطابق صدر پاکستان نے وفاقی بینکنگ محتسب کا رقم واپسی کا فیصلہ برقرار رکھتے ہوئے بینک آف پنجاب کی اپیل مسترد کر دی، صدر مملکت نے کہا کہ بینک نے مرحوم قرض دار کے خاندان سے غیر منصفانہ طور پر زائد مارک اپ لیا ہے۔

صدر مملکت نے اپنے فیصلے میں کہا بینک نے ضابطوں کے خلاف غیر ضروری طور پر روزمرہ کے معاملے کو الجھایا، بینک کی اپیل میرٹ پر نہیں، بینک قانونی ذمہ داری میں ناکام رہا۔

واضح رہے کہ شہری میاں اللہ وسایا نے بینک آف پنجاب سے 2015 میں 30 لاکھ روپے قرض لیا تھا، شہری نے 35 لاکھ روپے کے ریگولر انکم سرٹیفکیٹ بطور سیکیورٹی بینک کو جمع کرائے۔

جنوری 2017 میں شہری کی وفات ہوئی مگر بینک نے اکتوبر 2018 تک مارک اپ لیا، بینک نے سرٹیفکیٹ کیش کرائے، 57،294 روپے کی بجائے 480،489 روپے مارک اپ لیا۔

اللہ وسایا کی بیوہ نے بینک سے مارک اپ لینے اور زائد رقم معاف کرنے کی درخواست کی، تاہم بینک نے درخواست منظوری سے انکار کیا، جس پر شکایت کنندہ نے بینکنگ محتسب سے رجوع کر لیا۔

بینکنگ محتسب کے مطابق بینک نے اصل رقم پر زائد مارک اپ وصول کیا، اور معاملہ لٹکا کر ناانصافی کی، کوئی قانون یا ضابطہ بینک کو پرانے معاملات دوبارہ کھولنے سے نہیں روکتا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں