The news is by your side.

Advertisement

بھارتی آرمی چیف بی جے پی کا لیڈر قرار

نئی دہلی: بھارت کی اپوزیشن پارٹی کانگریس نے بھارتی آرمی چیف کو بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی) کا لیڈر قرار دے دیا۔

غیرملکی خبررساں ادارے کی رپورٹ کے مطابق بھارتی اپوزیشن پارٹی نے بھارتی آرمی چیف کے یونیورسٹی طالب علموں کے خلاف سخت بیان پر انہیں بی جے پی کا لیڈر قرار دے دیا۔

کانگریس نے بی جے پی کی ہندووتوا اور آر ایس ایس سوچ پر بھارتی آرمی چیف اور بی جے پی کو کڑی تنقید کا نشانہ بنایا۔

بھارتی آرمی چیف نے چند روز قبل اپنے ایک بیان میں کہا تھا کہ سٹیزن شپ ایکٹ کے خلاف احتجاج کرنے والے طلبا فسادی ہیں۔

مزید پڑھیں: مودی حکومت کا شہریت کا نیا قانون مسلمانوں کیخلاف ہے، ایمنسٹی انٹرنیشل انڈیا

واضح رہے کہ گزشتہ روز انسانی حقوق کی عالمی تنظیم ایمنسٹی انٹرنیشل انڈیا نے کہا ہے کہ مودی حکومت کا شہریت کا نیا قانون مسلمانوں کیخلاف ہے،مسلمانوں کو نشانہ بنانے کے درجنوں واقعات ریکارڈ ہوئے.

ایمنسٹی انٹرنیشل انڈیا کے مطابق مسلمانوں کو شہریت کی درخواست کے حق سے بھی محروم کردیا گیا ہے، بھارتی حکومت کا مسلمانوں کو حراستی مراکز میں رکھنے کا منصوبہ بھی ہے، اس اقدام سے دنیا میں بےوطن افراد کاسب سے بڑابحران پیدا ہوگا۔

خیال رہے کہ مسلمانوں کے خلاف قانون پر بھارتی صدر کی جانب سے دستخط کے بعد زور پکڑنے والے ملک گیر احتجاج میں ہندو شہری بھی بڑی تعداد میں شامل ہو رہے ہیں، فرانسیسی خبر رساں ایجنسی کے مطابق دلی میں نوجوان لڑکیاں اپنے والدین کے خلاف جا کر احتجاج میں شرکت کر رہی ہیں۔ ایک طالبہ کو ان کے والدین نے کالج سے نکالنے اور اس کی شادی کروانے کی دھمکی بھی دی۔

Comments

یہ بھی پڑھیں