The news is by your side.

Advertisement

عابد ملہی کی گرفتاری پر انعام، چیف جسٹس ہائی کورٹ کا ردعمل

لاہور: چیف جسٹس ہائی کورٹ نے گجر پورہ زیادتی کیس کے مرکزی ملزم عابد ملہی کی گرفتاری پر انعام پر اظہار برہمی کیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق لاہور ہائی کورٹ نے لاہور موٹر وے پر خاتون سے زیادتی کے ملزم کو گرفتار کرنے کے لیے انعام کے اعلان پر حیرت کا اظہار کیا۔

چیف جسٹس ہائی کورٹ جسٹس محمد قاسم خان نے سخت ریمارکس میں کہا ملزم کو پکڑنا پولیس کی ذمہ داری ہے اس پر انعام کیسا، کیا اب پولیس افسر انعام کا انتظار کرے اور پھر ملزم پکڑے۔ چیف جسٹس نے اظہار برہمی کرتے ہوئے کہا پولیس سے تو ملزم پکڑا نہیں جاتا اور اہل کار قبضے کرتے پھر رہے ہیں۔

گجرپورہ زیادتی کیس: عابد کو پولیس نے گرفتار نہیں بلکہ پیش کیا ہے، والد کا دعویٰ

یاد رہے کہ پولیس کے ساتھ 33 دن کی آنکھ مچولی کھیلنے کے بعد مرکزی ملزم عابد کو اس کے والد نے دو دن قبل گرفتار کروایا، اس سے قبل آٹھ اسپیشل ٹیمیں بھی عابد کا سراغ نہ لگا سکی تھیں، ملزم پولیس کو 3 بار چکما دیکر فرار ہو چکا تھا۔

پولیس کا کہنا تھا کہ ملزم عابد قصور، ننکانہ اور شیخوپورہ سے پولیس کو چکما دے کر فرار ہوا تھا، ملزم کی اطلاع دینے والے کو 25 لاکھ روپے انعام دینے کا اعلان بھی کیا گیا۔

عثمان بزدار کا آئی جی پنجاب اور ٹیم کے لیے 50 لاکھ انعام کا اعلان

پولیس کے اعلیٰ حکام نے گجرپورہ زیادتی کیس کے مرکزی ملزم عابد علی کو گرفتار کرنے والے انویسٹی گیشن اور سی آئی اے افسران کے لیے انعام کا اعلان کیا تھا۔ گزشتہ روز وزیر اعلیٰ پنجاب عثمان بزدار نے بھی آئی جی پنجاب اور ان کی ٹیم کے لیے پچاس لاکھ روپے انعام کا اعلان کیا تھا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں