The news is by your side.

Advertisement

سعودی عرب واپسی کے لیے 2 اہم شرائط مقرر

ریاض: سعودی حکام نے سعودی عرب آمد کے لیے 2 شرائط مقرر کی گئی ہیں جن کا تعلق کرونا وائرس کو پھیلنے سے روکنے کے لیے ہے، یہ شرائط سعودی عرب پہنچنے والے مقامی افراد اور غیر ملکی شہریوں پر لاگو ہوں گی۔

سعودی ویب سائٹ کے مطابق سعودی وزارت داخلہ نے کہا ہے کہ مملکت آتے وقت سعودی شہریوں سمیت جی سی سی ممالک اور غیر ملکیوں پر کرونا وائرس کی وبا کو پھیلنے سے روکنے کے لیے مقرر حفاظتی ضوابط لاگو کیے جائیں گے۔

وزارت داخلہ کا کہنا ہے کہ کرونا وائرس سے نمٹنے اور متعدد ملکوں میں کووڈ 19 کی دوسری لہر اور کرونا ویکسین نہ ہونے کی وجہ سے سال رواں کے آخر تک سفری پابندیاں برقرار رہیں گی۔

وزارت داخلہ کے مطابق جی سی سی ممالک کے شہریوں اور خروج و عودہ، ملازمت، اقامہ یا وزٹ ویزا ہولڈر غیر ملکیوں کو بھی سعودی عرب آنے کی اجازت کرونا ضوابط کی پابندی کے ساتھ مشروط ہوگی۔

بیان میں کہا گیا کہ ہر آنے والے کو یہ ثابت کرنا ہوگا کہ وہ کرونا وائرس سے پاک ہے، اس حوالے سے سرٹیفکیٹ بیرون مملکت رجسٹرڈ ادارے ہی کا قابل قبول ہوگا۔ سعودی عرب پہنچنے سے 48 گھنٹے سے زیادہ پرانا ٹیسٹ کا سرٹیفکیٹ قابل قبول نہیں ہوگا۔

حکام کے مطابق سعودی عرب آمد کے لیے 2 شرائط مقرر کی گئی ہیں۔ پہلی شرط یہ ہے کہ جی سی سی کا شہری یا غیر ملکی کرونا وائرس سے پاک ہو، اس کے لیے اسے پی سی آر کروانا ہوگا۔ پی سی آر کی رپورٹ سعودی عرب پہنچنے سے 48 گھنٹے تک کی ہو، اگر زیادہ وقت گزر گیا تو رپورٹ غیر مؤثر ہوگی۔

دوسری شرط یہ ہے کہ پی سی آر کی رپورٹ متعلقہ ملک کے ایسے میڈیکل سینٹر سے جاری کردہ ہو جو سعودی عرب میں رجسٹرڈ ہو۔

Comments

یہ بھی پڑھیں