The news is by your side.

Advertisement

اینکر ارشد شریف کو ہراساں کرنے پر سیاسی و صحافتی حلقوں کا شدید ردعمل

اسلام آباد: اے آر وائی نیوز کے سینیئر اینکر ارشدشریف کو ہراساں کئے جانے پر سیاسی رہنماؤں اور صحافتی حلقوں کی جانب سے شدید ردعمل کا اظہار کیا گیا ہے۔

پی ٹی آئی رہنما شہباز گل نے سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر جاری بیان میں کہا کہ ارشدشریف نے ملک کیلئے ففتھ جنریشن وار لڑی، اس کا قصور یہ ہے کہ اسکےجسم میں بہادر،محب وطن فوجی کاخون ہے، جو اسے نڈر اور وطن پرست رہنے پر مجبور کرتا ہے۔

شہباز گل نے ارشد شریف کو ہراس کرنے کے عمل کو انتہائی افسوسناک قرار دیتے ہوئے کہا کہ میں ارشد کو جانتا ہوں،جتنا دباؤ گے اتنا پورے قد سے وہ کھڑا ہوگا۔

پی ٹی آئی رہنما نے خبردار کیا کہ اگر ارشدشریف کو کسی بھی قسم کا نقصان پہنچا تو ہمارا وعدہ ہے آپ کا محاصرہ کیا جائے گا، کہیں عید کے بعد والا دمادم مست قلندر پہلے ہی نہ ہو جائے۔

انہوں نے مزید کہا کہ پوری قوم آج امریکا میں بننے والی سازش کے خلاف کھڑی ہے، آپ کی ایسی حرکتوں سے آپ کو مزید شرمندگی ہونی ہے، ابھی تک جو بھی آپ نے کیا،اپنا ہی نقصان کیا ہے۔

فواد چوہدری کا عالمی تنظیموں کو مراسلہ لکھنے کا اعلان

پی ٹی آئی رہنما فواد چوہدری نے اے آر وائی نیوز سے خصوصی گفتگو میں اینکر ارشد شریف کو ہراساں کرنے کی مذمت کرتے ہوئے کہا کہ چار سے پانچ صحافی حکومت کو ورغلارہے ہیں، یہ ایسےصحافی ہیں جنہوں نے کچھ فیک ٹوئٹس کیں اور مہرے کےطور پر استعمال ہورہےہیں۔

فواد چوہدری نے کہا کہ ارشد شریف اور صابر شاکر کو بھی ہراساں کیاجارہاہے، خوشی ہے کہ اسلام آباد ہائیکورٹ نے نوٹس لیا ہے، میں عالمی صحافتی تنظیموں کو مراسلہ بھی لکھ رہاہوں۔

انہوں نے مزید کہا کہ اےآر وائی نیوز کیخلاف ٹرینڈ چلایا گیا ،حکومتی شخصیات نے ٹوئٹس کیں، بعض ن لیگی رہنما تو اے آر وائی کو دھمکیاں دے رہے ہیں، کسی کو غلط فہمی نہیں ہونی چاہیے آزادی صحافت کو قید کرنے کا دور گزرچکا، پاکستان کا ہر شہری اس وقت ارشد شریف ہے سب اےآر وائی کیساتھ کھڑے ہیں۔

پاکستان فیڈرل یونین آف جرنلسٹس کے نائب صدر لالہ اسد پٹھان

پاکستان فیڈرل یونین آف جرنلسٹس کے نائب صدر لالہ اسد پٹھان نے بھی اے آر وائی نیوز کے اینکر ارشد شریف کو ہراساں کرنے کی شدید مذمت کرتے ہوئے کہا کہ بدقسمتی ہے کہ یہ لوگ اپوزیشن میں ہوتے ہوئے آزاد صحافت کےنعرے لگاتے ہیں اور حکومت میں آتے ہیں تو آزادی صحافت پر قدغن لگاتے ہیں۔

لالہ اسد نے کہا کہ عدلیہ ہمیشہ میڈیا کیساتھ کھڑی رہی دوبارہ عدالت کا دروازہ کھٹکھٹائیں گے۔

ارشد شریف کیساتھ عدالت جانے کا اعلان

صحافی افضل بٹ نے بھی اے آر وائی نیوز سے خصوصی گفتگو میں کہا کہ کل ہم سب ارشد شریف کیساتھ عدالت جائیں گے، کسی کو یہ حق نہیں کہ آزادی اظہار رائے سے روکے اور گالی دے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں