The news is by your side.

Advertisement

پاکستان میں غیر ملکی سرمایہ کاری میں اضافے کا امکان ہے، ایشیائی ترقیاتی بینک

اسلام آباد : ایشیائی ترقیاتی بینک کا کہنا ہے کہ آئندہ مالی سال پاکستان میں غیرملکی سرمایہ کاری میں اضافہ متوقع ہے جبکہ 2020 میں مہنگائی میں اضافے کی شرح 12 فیصد تک رہےگی۔

تفصیلات کے مطابق ایشیائی ترقیاتی بینک کی پاکستان سے متعلق رپورٹ جاری کی ہے، جس میں کہا گیا ہے کہ آئی ایم ایف پروگرام میں جانے کے باعث غیرملکی سرمایہ کاروں کا اعتماد کافی حدتک بحال ہوا ہے ، آئندہ مالی سال پاکستان میں غیرملکی سرمایہ کاری میں اضافے کا امکان ہے۔

رپورٹ میں کہا گیا کہ پروگرام سے ملٹی، بائی لیٹرل ذرائع سے فنانسنگ کا حصول بہترہوگا، یہ اقدام پاکستان کےزرمبادلہ ذخائرمیں اضافےکاباعث بنے گا، آئندہ مالی سال کے اختتام تک زرمبادلہ کا حجم دس ارب ڈالرسے زائد ہو جائےگا جبکہ سعودی عرب سے1ارب ڈالرخام تیل کی سہولت کی مدمیں ملنے کا امکان ہے۔

رپورٹ میں بتایا گیا پاکستان میں آئندہ مالی سال بھی افراط زرکی شرح زیادہ رہنے اور 2020 میں مہنگائی میں اضافے کی شرح 12 فیصد تک رہنے کا امکان ہے ، مہنگائی میں اضافےکی وجہ مقامی یوٹیلٹیزکی قیمتوں میں اضافہ ہے، یہ اضافہ طے شدہ پلان کے مطابق کیا جائے گا۔

ایشیائی ترقیاتی بینک کا کہنا ہے کہ آئی ایم ایف پروگرام کی اصلاحات سےقرض میں کمی متوقع ہے ، حکومت سماجی بہبود پروگرام ، فلیکس ایبل ایکسچینج ریٹ پر زوردے رہی ہے، آئندہ مالی سال معاشی شرح نمو2.8فیصد تک رہے گی۔

رپورٹ میں خدشہ ظاہر کیا ہے کہ مقامی طلب میں کمی کےباعث صنعتی ترقی کم رہے گی تاہم حکومتی اقدامات کے باعث زراعت میں بہتری متوقع ہے ، مجموعی محصولات میں سولہ اعشاریہ چھ فیصد تک اضافے کا امکان ہے۔

اے ڈی بی کا کہنا ہے کہ آئندہ مالی سال جاری کھاتوں کا خسارہ جی ڈی پی کا دواعشاریہ آٹھ فیصد تک محدود ہوجانے کی امیدہے اور روپے کی قدر توازن کےقریب ہے، روپے کی قدرمیں کمی برآمدات میں اضافے کا باعث بنے گی۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں