کربلا کا میدان حق اور باطل کے درمیان معرکہ تھا، زرداری
The news is by your side.

Advertisement

کربلا کا میدان حق اور باطل کے درمیان معرکہ تھا، زرداری

کراچی : سابق صدر پاکستان اور پاکستان پیپلزپارٹی پارلیمنٹیرینز کے صدر آصف علی زرداری نے کہا ہے کہ امام عالی مقام حضرت امام حسینؓ کا فلسفہ شہادت ظلم، جبر اور آمریت کے خلاف جدوجہد کے لئے مشعل راہ ہے۔

تفصیلات کے مطابق یوم عاشور پر اپنے پیغام میں سابق صدر نے آصف علی زرداری نے کہا کہ حضرت امام حسینؓ نے انسانی زندگی کے لئے سنہری اصول متعارف کرائے، کربلا کا میدان حق اور باطل کے درمیان معرکہ تھا جس میں حق فتحیاب ہوا جبکہ باطل کو شکست ہوئی۔

آصف علی زرداری کا کہنا تھا کہ نواسہ رسولﷺ کی عملی زندگی کو مشعل راہ بنانے کی ضرورت ہے، امام عالی مقام کی مثال نے ہمیں ناانصافی اور زیادتی سے لڑنا سکھایا ہے۔

سابق صدر نے کہا آج ظلم اور جھوٹ کی شیطانی قوتیں ایک مرتبہ پھر عسکریت پسندی اور نام نہاد جہادی تنظیموں کی شکل میں سر اٹھا رہی ہیں اور ان لوگوں نے اپنے جھوٹے نظریے کے نام پر پورے ملک میں تباہی پھیلائی ہے۔

ان کا مزید کہنا تھا کہ آج یوم عاشور ہم سے تقاضا کرتا ہے کہ ہم اپنی تمام طاقت اورقوت سے اس سوچ اور ایسی قوتوں کا خاتمہ کردیں۔

مزید پڑھیں : نواسۂ رسولﷺ اور شہدائے کربلا کی یاد میں شہرشہر شبیہہ ذوالجناح کے جلوس برآمد

آصف علی زرداری نے عوام سے کہا کہ آپس میں اپنی صفوں میں اتحاد پیدا کریں، آج یکجہتی اور برداشت کی جتنی ضرورت ہے، اتنی پہلے کبھی نہیں تھی۔

خیال رہے نواسۂ رسولﷺ حضرت امام حسین اور ان کے ساتھیوں کی لازوال قربانی کی یاد میں آج شہر شہر علم و شبیہ ذوالجناح کے جلوس نکالے جا رہے ہیں، اس موقع پرسیکیورٹی کے سخت ترین انتظامات ہیں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں