site
stats
پاکستان

نوازشریف نے اپنی بادشاہت بچانے کے لیے ملک کی جڑیں کاٹیں، آصف زرداری

میاں صاحب کو چھوڑ دیا تو اللہ ہمیں معاف نہیں کرے گا

لاہور : سابق صدر آصف زرداری نے کہا ہے کہ کشمیر پاکستان کی شہہ رگ ہے اور یہ بات ہمیں نوجوان نسلوں کو بتانی ہے لیکن میاں صاحب نے آج کشمیر میں جلسہ تو کیا لیکن کشمیریوں کے حق میں بات کرنے کے بجائے سیاسی گفتگو کرتے رہے اور اگر یہی کرنا تھا تو کشمیر گئے ہی کیوں تھے.

وہ موچی گیٹ پر پاکستان پیپلز پارٹی کے یوم یکجہتی کشمیر کی مناسبت سے منعقد کردہ جلسے سے خطاب کر رہے تھے، سابق صدر کا کہنا تھا کہ آج جس جگہ جلسہ ہو رہا ہے وہاں قائد اعظم محمد علی جناح اور قائد عوام ذوالفقارعلی بھٹو بھی آپ سے مخاطب رہے ہیں.

انہوں نے کہا کہ بی بی شہید بھی اسی مقام پر جلسہ کرچکی ہیں اور آج میری خوش قسمتی ہے کہ یہاں آکر آپ سے مخاطب ہوں اور کامیاب جلسے پر پنجاب کے بہادر بھائیوں اور بہنوں کو سلامِ تحسین پیش کرسکتا ہوں جو شریف خاندان کی نااہلی اور کرپشن کے خلاف جمع ہوئے.

آصف علی زرداری نے کہا کہ موجودہ حکمرانوں نے 3 برسوں میں ملک کی تاریخ کا سب سے زیادہ قرضہ لے کر قوم کے بچے بچے کو مقروض کردیا ہے اور اب موجودہ حکومت کا لیا گیا قرضہ ہماری آئندہ آنے والی نسلوں کو اتارنا پڑے گا اور یہ تو ملک سے فرار ہو جائیں گے.

انہوں نے سابق وزیراعظم نوازشریف کو سخت تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہا کہ کچھ لوگ اپنے گاؤں کا نام جاتی امرا تو رکھتے ہیں لیکن کشمیر کا غم نہیں رکھتے بلکہ کشمیریوں کے زخموں پر نمک پاشی کرتے ہوئے مودی سرکار سے پینگیں بڑھائی جاتی ہیں.

سابق صدر کا مزید کہنا تھا کہ آج نواز شریف مشرف کو پاکستان واپس لانے اور سزا دلوانے کی باتیں کرتے ہیں لیکن پرویز مشرف کے ملک سے باہر جانے پر عدالت میں کہا کہ ہمیں کوئی اعتراض نہیں ہے اور اب بڑی بڑی باتیں کر رہے ہیں.

آصف زرداری نے کہا کہ ہم نے جمہوریت کی خاطر 15 سال جیل میں کاٹی ہے اور اگر چاہوں تو آپ کی حکومت کو گرا سکتا ہوں اور آپ کچھ بھی نہیں کرسکیں گے لیکن میں چاہتا ہوں کہ آپ حالات کو سمجھیں اور تصادم کی راہ نہ اپنائیں اور اپنا رویہ درست کریں.

انہوں نے مزید کہا کہ نواز شریف کو سی پیک کے بارے میں کچھ علم نہیں ہے یہ میرے دور میں شروع ہوا تھا جس کا کریڈٹ یہ لینا چاہتے ہیں اور اپنی ناسمجھی میں سی پیک کو قرض لینے کی تنظیم سمجھ لیا ہے جب کہ سی پیک سے ہمیں خطے کی معاشی طاقت بننا تھا.

آصف زرداری نے کہا کہ اب میں ، بلاول بھٹو اور آصفہ بھٹو زرداری پارلیمنٹ میں جائیں گے اور میں وعدہ کرتا ہوں کہ آئندہ انتخابات شفاف ہوں گے اور سندھ کی طرح بلوچستان اور پنجاب سے بھی پیپلز پارٹی کلین سوئپ کرے گی، اب ہم نواز شریف جیسے درندے کو برداشت نہیں کرسکتے.

انہوں نے کہا کہ اگر ہم نے میاں صاحب کو چھوڑ دیا تو شاید اللہ ہمیں معاف نہیں کرے گا کیوں کہ نواز شریف قوم کا چور ہے جس نے نے اپنی بادشاہت کو مضبوط کرنے کیلئے پاکستان کی جڑیں کاٹیں.


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں، مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہنچانے کےلیے سوشل میڈیا پرشیئر کریں۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

loading...

Most Popular

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top