The news is by your side.

Advertisement

پارلیمنٹ کو گالی نہیں دی جاسکتی، آصف زرداری

اسلام آباد: سابق صدر اور پاکستان پیپلزپارٹی کے شریک چیئرمین آصف زرداری نے کہا ہے کہ پارلیمنٹ کو گالی نہیں دی جاسکتی کیونکہ ایوان کا شمار ملک کے مقدس اداروں میں ہوتا ہے۔

تفصیلات کے مطابق تحریک انصاف کے چیئرمین عمران خان اور شیخ رشید احمد کے پارلیمنٹ سے متعلق بیانات کو مسترد کرتے ہوئے آصف علی زرداری نے کہا کہ ’پارلیمنٹ کو گالی کی نہیں بلکہ مضبوط بنانے کی ضرورت ہے۔

سابق صدر کا کہنا تھا کہ ’پارلیمنٹ میں قانون سازی کی جاتی ہے جس کی بنیاد پر اُسے گالی نہیں دی جاسکتی اور نہ ہی ایوان کو برا بھلا کہا جاسکتا ہے، ایوان میں کوئی ایک جماعت نہیں بلکہ تمام سیاسی جماعتیں شامل ہیں۔

مزید پڑھیں: پارلیمنٹ پر لعنت بھیجنے کا بیان، شیخ رشید اورعمران خان کیخلاف مذمتی قرارداد منظور

آصف زرداری کا کہنا تھا کہ نوازشریف کو پارٹی سربراہ بنانے کی قرار داد کو جب ایوانِ بالا میں پیش کیا گیا تو پیپلزپارٹی نے بل کی مخالفت کی جبکہ پارلیمنٹ کے لیے غلط زبان استعمال کرنے والی جماعت نے اجلاس کا بائیکاٹ کیا۔

اُن کا کہنا تھا کہ تمام ملکی جماعتوں کو باہمی اتحاد سے پارلیمنٹ کو مضبوط بنانے کی ضرورت ہے تاکہ کوئی متنازع قانون نہ بنایا جاسکے اور قانون کی کمزوری کو دور بنایا جاسکے۔

یہ بھی پڑھیں: ایوان کوگالی دے کر اپنی عزت میں اضافہ نہیں بلکہ گھٹیا پن کا مظاہرہ ہے، خواجہ آصف

واضح رہے کہ گزشتہ روز پاکستان عوامی تحریک کی جانب سے منعقدہ جلسے سے خطاب کرتے ہوئے شیخ رشید نے اسمبلی کے خلاف نازیبا الفاظ استعمال کرتے ہوئے رکن قومی اسمبلی کی نشست سے استعفیٰ دینے کا اعلان کیا گیا بعد ازاں عمران خان نے بھی پارلیمنٹ کے خلاف سخت زبان استعمال کیا تھا۔


اگر آپ کو یہ خبر پسند نہیں آئی تو برائے مہربانی نیچے کمنٹس میں اپنی رائے کا اظہار کریں اور اگر آپ کو یہ مضمون پسند آیا ہے تو اسے اپنی فیس بک وال پر شیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں