The news is by your side.

Advertisement

ضیاء کے فلسفے کو فروغ دینے والے مشال قتل کے ذمہ دار ہیں، آصف زرداری

مالاکنڈ : پاکستان پیپلز پارٹی پارلیمینٹیرین کے سربراہ آصف زرداری نے وزیراعظم کو مخاطب کرتے ہوئے کہا ہے کہ میاں صاحب آپ ضیاءالحق کے فلسفے کو آگے لے کر چلے ہیں اور یہی فلسفہ مشال کے قتل کا ذمہ دار ہے۔

آصف زرداری مالاکنڈ میں جلسہ عام سے خطاب کر رہے تھے انہوں نے کہا کہ ضیاءالحق کے فلسفے نے ملک میں دہشت گردی کو رواج دیا اور عدم برداشت کو ختم کو کیا۔

انہوں نے وزیراعظم کو تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہا کہ یہ لوگ مزدوروں کوتنخواہ نہیں دیتے اور مزدوروں کو کچلتے ہیں انہیں حقوق سے محروم رکھتے ہوئے اپنی مِلیں چلا تے ہیں۔

سابق صدر نے کہا کہ میاں صاحب سمجھتے ہیں کہ اگر وہ اور ان کے چند دوست ترقی کریں تو پورا ملک ترقی کرے گا جب کہ میں سمجھتا ہوں کہ غریب امیر ہوگا تو ملک امیر ہوگا۔

آصف زرداری نے کہا کہ ایک کپتان ہے جو خود کو نوجوانوں کا قائد کہتا ہے اور اپنی پہچان بہ طور پختون کراتا ہے جب کہ قوم اس جعلی خان کے اصل چہرے سے واقف ہو چکی ہے اور اب یہ جعلی خان قوم کو زیادہ عرصے بے وقوف نہیں بناتا ہے۔

انہوں نے کہا کہ دریائے سوات کو افر پختہ کردیا جائے تو بہت سا پانی محفوظ ہوجائے گا جس کی بنیاد پر بھی بجلی پیدا کی جا سکتی اور یہ پانی کی قلت دور کرنے میں بھی کارگر ثابت ہو گا لیکن حکمرانوں کو صرف جنگلہ بس بنانے کی فکے ہے۔

پاکستان پیپلز پارٹی پارلیمینٹرین کے سربراہ آصف زرداری نے کہا کہ کارکنان پیپلز پارٹی کا اثاثہ ہیں اور میں اپنے کارکنان کو چھوڑ کر کہیں نہیں جاؤں گا بلکہ اگر وقت آیا تو کارکنان کے ساتھ ہی شہید ہوجاؤں گا۔

آصف زرداری نے کہا کہ ججوں نے کہہ دیا ہے کہ گو نواز گو اور اب یہ نعرہ بچے بچے کی زبان پر ہوگا جس پر پورا پنڈال گو نواز گو کے نعرے سے گونج اُٹھا جب کہ آصف زرداری نے گو جعلی خان گو کے نعرے بھی لگوائے۔

 

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں