The news is by your side.

Advertisement

تقی عثمانی پر قاتلانہ حملہ، پولیس کی حملہ آور سے مفتی کی موجودگی میں تفتیش

کراچی: قانون نافذ کرنے والے اداروں کے اہل کار مفتی تقی عثمانی پر مبینہ قاتلانہ حملہ کرنے والے مشتبہ شخص کے گھر تک پہنچ گئے۔

ذرائع کے مطابق کاؤنٹر ٹیررازم ڈیپارٹمنٹ کے اہل کاروں نے مفتی تقی عثمانی پر حملہ کرنے والے شخص کو حراست میں لے لیا ہے، تفتیش کے دوران مشتبہ شخص اور اس کے خاندان کے بارے میں معلومات حاصل کی گئیں۔

تفتیشی ذرائع کا کہنا ہے کہ ملزم 2 سال سے مختلف نوعیت کے ذہنی امراض کا شکار ہے، ملزم گلشن اقبال کے ذہنی امراض کے کلینک سے علاج کر رہا ہے، اور اس نے رابعہ سٹی میں اسٹیٹ ایجنسی بھی کھول رکھی ہے۔

تفتیشی ذرائع کے مطابق ملزم کی 2 بیویاں اور ایک بیٹی ہے، دونوں بیویاں ملزم سے ناراض ہیں۔

وزیر داخلہ کا مفتی تقی عثمانی سے رابطہ

ملزم سے برآمد ہونے والے چاقو کا ماہرین سے معائنہ کرایا جائے گا، تاکہ چاقو پر زہر یا کسی اور مادے کی موجودگی سے متعلق معلوم ہو سکے، مزید قانونی کارروائی کا تعین ماہرین کی اس رپورٹ کے بعد کیا جائے گا۔

تفتیشی ذرائع نے یہ بھی بتایا ہے کہ سی ٹی ڈی حکام نے زیر حراست ملزم سے سوالات اور پوچھ گچھ مفتی تقی عثمانی و دیگر علما کی موجودگی میں کی، سی ٹی ڈی کا کہنا ہے کہ ابتدائی طور پر ملزم ذہنی امراض کا شکار نظر آتا ہے، اور دہشت گرد کارروائی کے امکانات بظاہر نظر نہیں آ رہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں