The news is by your side.

Advertisement

آڈیٹر جنرل رپورٹ نے نواز دور کی بے ضابطگیوں کا بھانڈا پھوڑ دیا

اسلام اباد : آڈیٹر جنرل رپورٹ نے نواز دور کی بے ضابطگیوں کا بھانڈا پھوڑ دیا، رپورٹ میں متعددوزارتوں اورڈویژنزمیں ایک سوچھپن کھرب روپے کی بے ضابطگیوں کی نشاندہی کی گئی ہے۔

تفصیلات کے مطابق آڈیٹر جنرل آف پاکستان کی آڈٹ سال دوہزار اٹھارہ انیس کی رپورٹ جاری کردی گئی ، رپورٹ میں مالی سال دو ہزار سترہ اٹھارہ کا آڈٹ کیا گیا، رپورٹ میں ایک سو چھپن کھرب روپےکی بےضابطگیوں کی نشاندہی کی گئی ہے۔

اے جی پی نے خلاف قواعد و ضوابط، اندرونی کنٹرول میں کمی ،عوامی فنڈز کی زیادہ ادائیگیوں اورغفلتوں کی طویل فہرست جاری کی ہے۔

رپورٹ کے مطابق گزشتہ حکومت نے دو ارب ڈالر کے عالمی بانڈز وزیراعظم کی منظوری سےجاری کئے، اس اجراء کیلئے قوائد کے مطابق منظوری وفاقی کابینہ سے لی جاتی ہے، دو ارب ڈالر کے یہ بانڈز زائد شرح سود پر جاری کئے گئے۔

رپورٹ میں انکشاف کیا گیا چالیس وفاقی اداروں کےعوامی فنڈز کی جانچ کے بعد سامنے آئے ہیں ، متعدد وزارتوں اور ڈویژنزاور بیرون ممالک میں متعلقہ اداروں میں اندرونی کنٹرولز کمزور ہونے کے باعث ایک کھرب پنتالیس ارب روپے کی بے ضابطگیاں بھی سامنے آئیں۔

دوسری جانب وزیربرائےاقتصادی امور حماد اظہر نے سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر کہا کہ نون لیگ کا شاید ضمیر جاگ گیا، نون لیگ نے اپنی حکومت کی رپورٹ کو بنیاد بنا کر کیا کچھ نہ کہہ ڈالا تاہم اب نون لیگی رہنماوں نے ان ٹویٹس کو کِسی وجہ سے ڈیلیٹ کردیا ہے۔

وفاقی وزیرفواد چوہدری نے ٹوئٹ میں کہا کہ ن لیگیوں نےاپنی خامیوں کو پی ٹی آئی کا بول دیا، کوئی حیرت نہیں یہ لوگ سیاست کے ڈسٹ بن میں پڑے ہیں۔

خیال رہے نون لیگی رہنما مریم اورنگ زیب اور خرم دستگیر نے رپورٹ پر ٹوئٹ کیا تھا۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں