The news is by your side.

Advertisement

خبردار! ٹک ٹاک چیلنج خوفناک آگ بھڑکا سکتا ہے، ویڈیو وائرل

واشنگٹن : انٹرنیٹ پر متحرک صارفین آئے روز اپنے دوستوں کو عجیب و غریب چیلنجز دیتے ہیں، اسی تناظر میں ایک نیا مقابلہ سامنے آیا جو انتہائی خطرناک اور گھر میں‌ خوفناک آتشزدگی کا باعث بن سکتا ہے۔

انٹرنیٹ پر نت نئے چیلنجز کا آنا کوئی نئی بات نہیں، صارفین ایک دوسرے کو کبھی ٹھنڈے پانی میں نہانے کا چیلنج دیتے ہیں تو کبھی منہ کے بل گرنے تو کرسی چلینج دیتے ہیں۔

ٹک ٹاک پر ان دنوں موبائل چارجر میں سکہ ڈالنے کا چیلنج بہت زیادہ مقبول ہورہا ہے اور صارفین اپنے دوستوں کو بھی اس مقابلے میں حصہ لینے کا مشورہ دے رہے ہیں۔

سکہ چارجر چیلنج کیا ہے؟

اس چیلنج کے دوران صارفین کو موبائل چارجر بجلی کے پلگ میں لگانا ہوتا ہے جس کے بعد ایک سکّہ اور چارجر کے درمیان ڈالنا ہوتا ہے جس کے باعث چنگاریاں نکلتی ہیں۔

اس پورے چیلنج کی ویڈیو بناکر صارفین کو سوشل میڈیا ویب سائٹ ٹک ٹاک پر اپلوڈ کرنا ہے۔

فائر فائٹر حکام کی جانب سے سوشل میڈیا ویب سائٹ ٹک ٹاک پر وائرل ہونے والے ویڈیو چیلنج کو خطرناک قرار دیا ہے۔’

فائر فائٹر حکام کا کہنا تھا کہ جب ایک طالب عالم بجلی کے سوئچ میں موبائل چارجر لگاتا ہے اور اس کے درمیان سکٗہ ڈالتا ہے جو شارٹ سرکٹ ہوتا جبکہ کچھ کیسز میں یہ شارٹ سرکٹ خوفناک آتشزدگی میں بھی بدل سکتا ہے۔

امریکی ریاست میساچوسٹس کے فائر مارشل آفس کی جانب سے یوٹیوب پر ایک وارننگ ویڈیو بھی جاری کی گئی ہے۔

غیر ملکی خبر رساں ادارے کا کہنا تھا کہ اس خطرناک ٹک ٹاک چیلنج کے باعث منگل کے پلےماؤتھ نارتھ ہائی اسکول میں آتشزدگی کا واقعہ پیش آیا تھا جس کا مقدمہ ایک طالب علم کے خلاف درج کیا گیا ہے۔

پلےماؤتھ فائر ڈیپارٹمنٹ کے چیف ایڈ بریڈلی نے بتایا کہ چارجر کو سوئچ میں لگانے کے بعد جب سکّہ س میں ڈالا جاتا ہے تو دات کو پگلا دیتا ہے اور پگھلی ہوئی دات کو آگے بڑھاتا ہے۔ جو چہرے، آنکھ کو نقصان پہنچا سکتی ہے جبکہ بینائی سے بھی محروم کرسکتی ہے جبکہ کپڑوں میں آگ بھی لگ سکتی ہے۔

فائر فائٹرز نے خبردار کیا ہے کہ یہ ممکنہ طور پر مہلک ہوسکتا ہے جس کے باعث دیوار میں آگ لگ سکتی ہے جس کا پتہ لگانے میں بہت دیر لگتی ہے۔

وہ یہ ویڈیوز دیکھنے والے والدین کہیں گے اپنے بچوں کو ایسا چیلنج پورا کرنے کے اصل خطرات کے بارے میں ضرور بتائیں جسے وہ سوشل میڈیا پر دیکھتے ہیں۔

fb-share-icon0
Tweet 20

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں