The news is by your side.

Advertisement

ایون فیلڈ ریفرنس: احتساب عدالت نے واجد ضیاء کوریکارڈ سمیت طلب کرلیا

اسلام آباد : احتساب عدالت نے شریف خاندان کے خلاف ریفرنسز میں نیب پراسیکیوٹر کی درخواست پر پاناما جے آئی ٹی کے سربراہ واجد ضیا کو طلب کرلیا۔

تفصیلات کے مطابق احتساب عدالت نے پاناما کیس کی جے آئی ٹی کے سربراہ واجد ضیاء کو اصل ریکارڈ کے ساتھ 22 فروری کو طلب کرلیا۔

نیب پراسیکیوٹر نے عدالت سے استدعا کی کہ ویڈیو لنک کے ذریعے دو غیرملکی گواہوں کے بیانات قلمبند کرنے کے لیے اصل ریکارڈ ہونا ضروری ہے اس لیے آئندہ سماعت پر جے آئی ٹی سربراہ کو طلب کیا جائے۔

احتساب عدالت نے نیب کی درخواست پر سربراہ جے آئی ٹی واجد ضیاء کو طلب کرتے ہوئے سابق وزیراعظم نوازشریف، مریم نواز اور کیٹپن ریٹائرڈ صفدر کو بھی حاضری یقینی بنانے کی ہدایت کردی۔

پاناما جے آئی ٹی کے سربراہ واجدضیاء پہلی بارنا اہل وزیراعظم نوازشریف کی موجودگی میں عدالت آئیں گے۔

خیال رہے کہ نیب کی جانب سے 22 جنوری کو شریف خاندان کے خلاف ایون فیلڈ پراپرٹیز سے متعلق ضمنی ریفرنس دائر کیا تھا جس میں استغاثہ کی جانب سے دو غیرملکی گواہ شامل ہیں۔


نیب کی نوازشریف، مریم نوازاورکیپٹن صفدرکا نام ای سی ایل میں ڈالنےکی سفارش


یاد رہے کہ گزشتہ ہفتے 14 فروری کو نیب نے سابق وزیراعظم میاں نوازشریف، ان کی صاحبزادی مریم نواز اور کیپٹن صفدر کا نام ای سی ایل میں ڈالنے کے لیے وزارت داخلہ کو خط لکھا تھا۔


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں، مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہنچانے کےلیے سوشل میڈیا پرشیئر کریں۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں