The news is by your side.

Advertisement

ایون فیلڈ ریفرنس : نیب اسپیشل پراسیکیوٹر نے کیس سے علیحدگی اختیارکرلی

اسلام آباد : نیب اسپیشل پراسیکیوٹر امتیاز رشید نے ناگزیر وجوہات پرایون فیلڈ کیس سے علیحدگی اختیار کرلی، جس کے بعد ریفرنس پر سماعت ملتوی ہونے کا امکان ہے۔

تفصیلات کے مطابق اسلام آباد ہائی کورٹ میں مریم نواز کی ایون فیلڈ ریفرنس میں اپیل کے معاملے پر نیب اسپیشل پراسیکیوٹر امتیاز رشید نے ناگزیر وجوہات پر کیس سے علیحدگی اختیار کرلی۔

اسلام آباد ہائی کورٹ میں ایون فیلڈ ریفرنس پرسماعت کل ہوگی تاہم نیب اسپیشل پراسیکیوٹر کی کیس سے علیحدگی کے بعد ایون فیلڈ ریفرنس پر سماعت ملتوی ہونے کا امکان ہے۔

اظہر صدیق ایڈووکیٹ نے امتیاز صدیقی کے کیس سے علیحدہ ہونے پرلاعلمی کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ مجھے نیب کی جانب سے تاحال کوئی ہدایت نہیں ملی۔

یاد رہے رواں سال جنوری میں ایون فیلڈ ریفرنس میں نیب نے مریم نوازکی بریت کی درخواست مسترد کرنے کی استدعا کرتے ہوئے کہا تھا کہ بریت کی درخواست عدالت کے ساتھ دھوکا دہی کے مترادف ہے۔

نیب کا کہنا تھا کہ مریم نوازکےوالدنوازشریف،بھائی حسن ،حسین نوازعدالتی مفرورہیں ، ملزمان نے لندن فلیٹس کی منی ٹریل نہیں دی، نوازشریف بتائیں لندن جائیدادیں کیسے خریدیں اور پیسہ کیسےمنتقل کیا؟

واضح رہے احتساب عدالت کے جج محمد بشیر نے ایون فیلڈ ریفرنس کا فیصلہ سناتے ہوئے نواز شریف کو دس مریم نواز کو سات اور کیپٹن ر صفدر کو ایک سال کی سزا سنائی تھی۔

بعد ازاں 19 ستمبر 2019 کو اسلام آباد ہائی کورٹ کےدو رکنی بینچ جسٹس اطہر من اللہ اور جسٹس میاں گل حسن اورنگ زیب نے مختصر فیصلے میں نوازشریف، مریم اور صفدر کی سزائیں معطل کرکے تینوں کی رہائی کا حکم دیا تھا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں