The news is by your side.

Advertisement

ایوی ایشن ڈویژن نے کراچی طیارہ حادثے کی رپورٹ مسترد کردی

کراچی : ایوی ایشن ڈویژن نے پی آئی اے طیارہ 8303 حادثے کی رپورٹ مسترد کردی، ترجمان ایوی ایشن ڈویژن کا کہنا ہے کجہ ایوی ایشن ڈویژن نے طیارہ حادثے پر کوئی تحقیقاتی رپورٹ جاری نہیں کی۔

تفصیلات کے مطابق ایک ماہ قبل کراچی ایئرپورٹ کے قریب واقع رہائشی آبادی میں پی آئی اے کا طیارہ 8303 حادثے کا شکار ہوگیا تھا جس کے نتیجے میں درجنوں مسافر لقمہ اجل بنے تھے، کچھ نشریاتی اداروں کی جانب سے طیارہ حادثے کی تحقیقاتی رپورٹ شائع کی گئی تھی جس کی ایوی ایشن ڈویژن نے تردید کردی ہے۔

ترجمان ایوی ایشن ڈویژن کا کہنا ہے کہ ایوی ایشن ڈویژن نے طیارہ حادثے پر کوئی تحقیقاتی رپورٹ جاری نہیں کی، کچھ میڈیا چینلز کی جانب سے چلائی جانے والی رپورٹ درست نہیں۔

واضح رہے کہ کراچی طیارہ حادثے کی ابتدائی تحقیقاتی رپورٹ میں کپتان اورائیرٹریفک کنٹرولر کو حادثے کا ذمہ دار قرار دیا گیا ہے اور کہا گیا ہے کپتان نے پروسیجرپرعمل درآمد نہیں کیا تھا، کپتان ضرورت سے زیادہ پراعتماد تھا۔

پی آئی اے طیارہ حادثے کا ذمہ دار کون؟ نام سامنے آگئے

خیال رہے ابتدائی رپورٹ آج وزیراعظم کو پیش کی جائے گی، عمران خان سے وزیرہوابازی غلام سرورخان کی ملاقات آج سہ پہر ہوگی، ملاقات سے قبل وزیرہوابازی کی زیرصدارت اجلاس ہوگا ، جس میں رپورٹ کےاہم نکات کاجائزہ لیا جائے گا اور رپورٹ قومی اسمبلی میں پیش کرنے سے متعلق وزیراعظم سے مشاورت ہوگی۔

Comments

یہ بھی پڑھیں