The news is by your side.

Advertisement

عوامی مارچ : پیپلزپارٹی کا فیض آباد کی بجائے ڈی چوک پر پڑاؤ ڈالنے کا فیصلہ

لاہور : پیپلزپارٹی نے فیض آباد کی بجائے ڈی چوک پر پڑاؤ ڈالنے کا فیصلہ کرلیا ، اس سلسلے میں پیپلزپارٹی نے انتظامیہ سےڈی چوک پر جلسےکی اجازت مانگ لی۔

تفصیلات کے مطابق پیپلزپارٹی نےعوامی مارچ کا رخ ڈی چوک کی طرف موڑنے کا فیصلہ کرلیا،ذرائع کا کہنا ہے کہ پیپلزپارٹی نے فیض آباد کی بجائے ڈی چوک پر پڑاو ڈالنے کا فیصلہ کیا ہے۔

ذرائع نے بتایا کہ پیپلزپارٹی نےخط لکھ کرانتظامیہ سےڈی چوک پرجلسےکی اجازت مانگ لی جبکہ اس حوالے سے چیف کمشنر اسلام آباد کو بھی خط لکھ دیا ہے۔

ذرائع کے مطابق پیپلزپارٹی نے خط میں کہا ہے کہ پیپلزپارٹی کاعوامی مارچ 8 مارچ کو اسلام آباد پہنچے گا، 8 مارچ کو ڈی چوک پرجلسہ کرنے کی اجازت دی جائے۔

اس سےقبل پیپلزپارٹی نے فیض آباد پر جلسے کیلئے 3 دن کی اجازت مانگی تھی، جس پر انتظامیہ نے3 دن کی بجائےایک دن جلسہ کرنےکی اجازت دی تھی۔

خیال رہے چیئرمین پیپلزپارٹی بلاول بھٹو کا لودھراں اور ملتان میں والہانہ استقبال کیا گیا ،  بلاول بھٹو نے خطاب میں وزیراعظم کو استعفے کے لیےپانچ دن کی ڈیڈ لائن دے دی۔

پی پی چیئرمین نے کہا پانچ دن میں استعفی نہ دیا تو اسلام آباد پہنچ کرعدم اعتماد سے گھربھیجیں گے، عوام حکومت کے ساتھ نہیں، وقت آگیا کہ پارلیمان کا بھی اعتماد اٹھ جائے۔

ان کا کہنا تھا کہ عدم اعتماد ہمارا جمہوری ہتھیار ہے، یہ ہماری کامیابی ہے کہ ساری اپوزیشن ایک پیج پرآچکی ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں