The news is by your side.

Advertisement

ایگزیکٹ جعلی ڈگری کیس: شعیب شیخ سمیت 23 ملزمان کو 7 سال قید کی سزا

اسلام آباد: ایگزیکٹ جعلی ڈگری کیس میں ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن جج نے شعیب شیخ سمیت 23 ملزمان کو 7 سال قید اور 13 لاکھ جرمانے کی سزا سنا دی۔

تفصیلات کے مطابق ایگزیکٹ جعلی ڈگری کیس میں ملزمان کو دفعہ 419 کے تحت ایک لاکھ روپے جرمانہ اور 3 سال قید کی سزا سنائی گئی۔

ضلعی سیشن عدالت نے دفعہ 420 کے تحت بھی ملزمان کو سزا سنائی، ملزمان کودھوکا دہی کے جرم میں 3 سال قید اور 2 لاکھ روپے جرمانہ بھی ادا کرنا پڑے گا۔

عدالت کی طرف سے ملزمان پر 468 اور 471 کی دفعات بھی عائد کی گئیں، ان دفعات کے تحت ملزمان کو سات سات سال قید اور پانچ پانچ لاکھ روپے جرمانہ ادا کرنا ہوگا۔

سیشن جج نے ایگزیکٹ جعلی ڈگری کیس میں شعیب شیخ سمیت دیگر ملزمان کو مجموعی طور پر 20 سال قید کی سزا سنائی، تاہم ملزمان پر سزاؤں کا اطلاق ایک ساتھ ہوگا، اس طرح ملزمان سات سات قید کاٹیں گے۔

عدالت نے اپنے 20 صفحات پر مشتمل حکم نامے میں کہا کہ تمام سزاؤں کا اطلاق ایک ساتھ ہو گا جب کہ ملزمان کو منی لانڈرنگ اور الیکٹرانک کرائم کے الزامات سے بری قرار دیا گیا۔

ایگزیکٹ جعلی ڈگری کیس: شعیب شیخ سمیت تمام ملزمان کا نام ای سی ایل میں


جعلی ڈگری کیس میں سیشن جج چوہدری ممتاز حسین نے ایگزیکٹ کے مالک شعیب شیخ کی اہلیہ عائشہ سمیت تین ملزمان کو  بری کر دیا۔

جعلی ڈگری کے کاروبار کے ذریعے دنیا بھر میں ملک کو بدنام کرنے والی کمپنی ایگزیکٹ کے کالے دھندے کا انکشاف مئی دو ہزار پندرہ میں نیو یارک ٹائمز نے کیا تھا، جس پر چیف جسٹس آف پاکستان نے از خود نوٹس لیا۔


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں۔ مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہنچانے کےلیے سوشل میڈیا پرشیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں