حمزہ شہباز نے جھوٹ بول کر مجھ سے شادی کی،صادق امین نہیں رہے، عائشہ احد aysha-ahad
The news is by your side.

Advertisement

حمزہ شہباز نے جھوٹ بول کر مجھ سے شادی کی،صادق امین نہیں رہے، عائشہ احد

لاہور : وزیراعلٰی پنجاب شہباز شریف کے صاحبزادے حمزہ شہباز کی اہلیہ ہونے کا دعوی کرنے والی عائشہ احد نے کہا ہے کہ حمزہ شہباز نے مجھ سے جھوٹ بول کر شادی کی اور بعد میں مُکر گئے اور پنجاب پولیس کے ذریعے مجھے میرے اہل خانہ سمیت تشدد کا نشانہ بنایا گیا۔

حمزہ شہباز کی اہلیہ ہونے کی دعوی دار عائشہ احد، رہنما پی ٹی آئی یاسمین راشد اور فردوس عاشق اعوان کے ہمراہ نیوز کانفرنس سے خطاب کر رہی تھیں انہوں نے انکشاف کیا کہ 2010 میں‌ حمزہ شہباز نے مجھ سے شادی کی تھی اور جھوٹ بولا تھا کہ پہلی بیوی کو طلاق دے چکا ہوں لیکن بعد ازاں وہ مجھ سے شادی کرنے ہی سے مُکر گئے۔

عائشہ احد نے کہا کہ میری کہانی کسی سےڈھکی چھپی نہیں ہے 7 سال سے اپنے حق کے لیے عدالتوں کے چکر لگا رہی ہوں جس کے دوران مجھے اور میری بیٹی کو آئینی اور شرعی حق سے محروم رکھا گیا اور جب اپنا حق مانگا تو مجھے اور میرے اہل خانہ کو تھانے کچہری کے چکر لگوائے گئے۔

عائشہ احد نے کہا کہ ایک عائشہ گلا لئی ہے جس کے لیے کمیٹی تشکیل دے دی گئی ہے میں بھی سوال کرتی ہوں کہ میرے پاس تو مکمل ثبوت ہیں میسیجز بھی محفوظ ہیں مجھے انصاف دلوانے کے لیے کب کمیٹی بنوائی جائے گی اس لیے میں نومنتخب وزیراعظم سے درخواست کرتی ہوں کہ مجھے بھی کمیٹی میں بلوایا جائے۔

انہوں نے کہا کہ میں شریف خاندان کی بہو ہوں تو پھر میاں صاحب اپنے گھرکی بہو کیلئے کمیٹی کب بنائیں گے؟ یہ کیسا انصاف ہے کہ گھرکی بہودربدرپھررہی ہے اس کیلئے آواز نہیں اٹھائی جاتی اور ایک دوسری خاتون کیلئے پارلیمانی کمیٹی بنادی جاتی ہے، میرے لیے کیوں نہیں بنی؟ چنانچہ گلالئی کی طرح میرے اور حمزہ شہباز کیلئے بھی کمیٹی بنائی جائے۔

عائشہ احد نے کہا کہ میرے ساتھ ظلم ہوا ہے، مجھے میرا قصوربتایا جائے کیا اپنی شادی کو منظر عام پر لانا گناہ ہے یا شادی سے مُکر جانا گناہ ہے؟ کس کے مرتکب حمزہ شہباز شریف ہوئے ہیں اور حقیقت تسلیم کرنے کے بجائے مجھ پر مسلم لیگ (ن) کے کارکنان کے ذریعے تشدد کرایا گیا، بے گناہ قید کرایا گیا جہاں تشدد بھی کیا گیا تھانوں میں بے عزت کیا گیا کیا کوئی اپنی بہن بہو کے ساتھ ایسا کرتا۔

انہوں نے کہا کہ میرا کسی سیاسی جماعت سے تعلق نہیں ہے اور نہ مجھے اس پریس کانفرنس کے لیے کوئی پیسہ دیا گیا ہے اور نہ ہی میرا مطالبہ پیسوں کا ہے لیکن میرا یہ مطالبہ ضرور ہے کہ میرے کیس کی شفاف تحقیقات ہونی چاہئے اور چوں کہ حمزہ شہباز نے مجھ سے جھوٹ بول کرشادی کی ہے اس لیے حمزہ شہباز اب صادق اورامین نہیں رہے ہیں۔

عائشہ احد نے حمزہ شہباز کے خلاف الیکشن کمیشن جانے کا اعلان کرتے ہوئے کہا کہ جو قانون دوسروں کیلئے لاگو کر رہے ہیں وہ میرے لیے بھی بنایا جائے مسلم لیگ (ن) کی خواتین کے حقوق کی بات کرتی ہے لیکن مجھے جوتے مارتی ہے اور حمزہ شہباز کا خاندان دھوکے میں شریک تھا۔

انہوں نے کہا کہ حمزہ شہباز کے خلاف میرے پاس ثبوت ہیں اور اب عدالت بھی جاؤں گی اس سے قبل مجھے دھمکیاں دی گئیں اس لیے الیکشن کمیشن نہیں جا سکی لیکن آج ڈاکٹر یاسمین راشد نے مجھ سے رابطہ کیا اور میری حوصلہ افزائی کی گو دیر سے صحیح لیکن میری سنوائی ہو اور پاکستان کی عدالتوں پر بھروسہ ہے کہ مجھے انصاف فراہم کیا جائے گا۔

پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے پاکستان تحریک انصاف کی خاتون امیدوار برائے این اے 120 نسرین راشد اور حال ہی میں شمول ہونے والی فردوس عاشق اعوان نے عائشہ احد کو انصاف دلوانے کے لیے ہر ممکن تعاون کا یقین دلاتے ہوئے کہا کہ اگر عائشہ گل لئی کے الزامات کی تحقیقات کے لیے پارلیمانی کمیٹی بن سکتی ہے تو حمزہ شہباز کے خلاف کمیٹی کیوں نہیں بن سکتی؟

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں