تازہ ترین

لیفٹیننٹ جنرل منیرافسر کی چیئرمین نادرا تعیناتی کی منظوری

نگران وزیراعظم انوارالحق کاکڑ کی زیرصدارت ہونے والے وفاقی...

مستونگ دھماکے میں ’را‘ ملوث ہے، نگراں وزیر داخلہ سرفراز بگٹی

اسلام آباد : نگراں وزیر داخلہ سرفراز بگٹی کا...

9 مئی واقعات : چیئرمین پی ٹی آئی کی 9 ضمانت کی درخواستیں منظور

اسلام آباد : اسلام آباد ہائی کورٹ نے 9...

نواز شریف نے 4 سال بعد وطن واپسی کیلئے ٹکٹ بک کروالیا

لندن : مسلم لیگ ن کے قائد نواز شریف...

مودی سرکار کی ناقص حکمت عملی، بھارت سنگین خطرے کی زد میں!

بھارت میں وارد ہونے والے نئے مہلک وائرس نیپا سے متعلق مودی سرکار کی ناقص حکمت عملی سے ہندوستان اس وقت سنگین خطرے کے گرداب میں ہے۔

بھارت کی ریاست کیرالہ میں مہلک وبائی وائرس نیپا پھوٹ پڑا جس سے کئی قیمتی جانیں ضائع ہوچکیں اور درجنوں متاثر ہیں لیکن اس کے تدارک کے لیے مودی سرکار کی ناقص حکمت اور صحت کے شعبے کی نالائقی کھل کر سامنے آ گئی ہے۔

عالمی سطح پر بھارتی فارماسیوٹیکل کمپنیوں کی بدنامی کے بعد اب نئے وائرس کے سامنے مودی سرکار کے ہاتھ پاؤں پھول گئے اور بھارتی ذرائع کے مطابق اب تک متعلقہ حکام نیپا وائرس کی وجہ معلوم کرنے میں ناکام رہے ہیں۔

عالمی ادارہ صحت کے مطابق یہ وائرس جانوروں خصوصاً چمگادڑوں کے ذریعے انسانوں میں پھیلتا ہے جو انتہائی مہلک اور تقریباً 45 دن کے دورانیے پر مشتمل ہوتا ہے۔

بروقت اقدامات نہ ہونے پر یہ وائرس بڑے پیمانے پر جانی نقصان کا سبب بن سکتا ہے۔
بھارتی میڈیا کے مطابق نیپا وائرس سے متعدد ہلاکتیں جبکہ 706 افراد متاثر ہو چکے ہیں اور اس کی وجہ سے کیرالہ میں نظام زندگی مفلوج، اسکولوں اور دفاتر کو بند کر دیا گیا ہے۔

بین الاقوامی ذرائع کے مطابق ناقص حکمتِ عملی اور لاپروائی کے سبب بھارت کی کئی ریاستیں ماضی میں بھی اس وبا کا سامنا کر چکی ہیں اور مودی سرکار کے پچھلے 5 سالوں میں یہ وبا تیسری بار پھوٹی ہے۔

Comments

- Advertisement -