The news is by your side.

Advertisement

سانحہ بلدیہ کا ملزم زبیرچریا اہلکار کے قتل کیس میں بے گناہ قرار

کراچی : سانحہ بلدیہ کیس میں گرفتار اہم ملزم زبیر چریا کو پولیس اہلکار کے قتل کیس میں بے گناہ قرار دے دیا گیا، پولیس نے انسداد دہشتگردی عدالت میں رپورٹ جمع کرادی۔

تفصیلات کے مطابق سانحہ بلدیہ کیس کا اہم ملزم زبیر چریا کو بے گناہ قرار دیدیا گیا ، ملزم زبیر عرف چریا پر پولیس اہلکار کو قتل کرنے کا الزام تھا، پولیس اپنے پیٹی بند بھائی کے مبینہ قاتل کے خلاف ثبوت جمع نہیں کرسکی اور لامحالہ انسداد دہشتگردی کی عدالت میں ملزم کو زیردفعہ چار سو ستانوے کے تحت بے گناہ قرار دے دیا گیا۔

پولیس نے اپنی رپورٹ میں کہا کہ ملزم کیخلاف قتل کے کوئی شواہد نہیں ملے۔

یاد رہے کہ ملزم کے خلاف اگست دو ہزار چودہ میں قتل کا مقدمہ تھانے پیر آباد میں درج کیا گیا تھا، ملزم زبیر چریا کو پندرہ اپریل دوہزار سولہ کو گرفتار کیا گیا تھا، جس کے بعد کراچی اے ٹی سی نے ملزم کو نوے روز کیلئے رینجرز کے حوالے کیا تھا۔

عدالت کے حکم پر بنائی جانے والی جے آئی ٹی میں ملزم زبیر چریا نے انکشاف کیا تھا کہ بلدیہ فیکٹری میں آگ لگی نہیں تھی، بھتہ نہ دینے پر لگائی گئی تھی، فیکٹری مالکان سے بیس کروڑ روپے بھتہ مانگا گیا تھا اور اس انکشاف کے بعدوہ سانحہ بلدیہ فیکٹری کااہم ملزم بن گیا ہے۔


مزید پڑھیں : سانحہ بلدیہ فیکٹری کا مرکزی ملزم  رحمن بھولا گرفتار


یاد رہے کہ چند روز قبل تھائی لینڈ میں روپوش بلدیہ فیکٹری کیس میں مطلوب اہم ملزم رحمان بھولا کو انٹر پول نے تھائی پولیس کی مدد سے گرفتار کرلیا تھا، عبدالرحمان المعروف بھولا بلدیہ فیکٹری کیس میں مطلوب اہم اور مرکزی ملزم تھا۔

جس کے بعد مرکزی ملزم عبدالرحمان عرف بھولا کو  تھائی لینڈ سے کراچی منتقل کردیا گیا تھا۔

بینکاک سے گرفتار سانحہ بلدیہ ٹاؤن کے اہم ملزم عبد الرحمٰن عرف بھولا نے فیکٹری میں آگ لگانے کے الزامات کی تردید کرتے ہوئے کہا کہ بلدیہ فیکٹری کو آگ اصغر بیگ نے لگائی

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں