site
stats
بلوچستان

بلوچستان اسمبلی نے ضمنی بجٹ برائے 2016-17منظور کرلیا

کوئٹہ : بلوچستان اسمبلی نے 34ارب 50کروڑ 21لاکھ 777ہزار 249روپے کا ضمنی بجٹ برائے 2015-16منظور کرلیا ۔

ارکان اسمبلی نے وسائل کی تقسیم میں بلوچستان کا کوٹہ بڑھانے پر زور دیا ہے، اسپیکر راحیلہ حمید درانی کی زیر صدارت اجلاس میں وزیراعلیٰ بلوچستان نواب ثناءاللہ خان زہری نے ترقیاتی اور غیر ترقیاتی اخراجات کے 23 مطالبات زر پیش کئے۔

ایوان نے غیر ترقیاتی اخراجات کی مد میں 21 ارب 58کروڑ 41لاکھ 99 ہزار روپے جبکہ ترقیاتی اخراجات کی مد میں 12ارب 91 کروڑ 79 لاکھ 78 ہزار 249 روپے کے مطالبات زر کی منطوری دی ۔

بلوچستان کے آئندہ مالی سال کے بجٹ 2016-17پر عام بحث میں حصہ لیتے ہوئے اپوزیشن لیڈر مولانا عبدالواسع کا کہنا تھا کہ موجودہ مرکزی حکومت نے بلوچستان کیلئے کچھ نہیں کیا جس کی زندہ مثال سی پیک ہے۔

محرومیوں کے ازالے کیلئے سی پیک کا آغاز بلوچستان سے کیا جانا چاہئے، انہوں نے صوبائی بجٹ میں غیر ترقیاتی اخراجات زیادہ ہونے پر تشویش کا اظہار کرتے ہوئے حکومت سے مطالبہ کیا کہ حکومت غیر ترقیاتی اخراجات کا جائزہ لیکر دوبارہ ایوان میں پیش کرے۔

حکومتی جعفر خان مندوخیل نے کا کہنا تھا کہ این ایف سی ایوارڈ میں بلوچستان کو جائزہ حق دیا جائے قومی وسائل کی تقسیم میں صرف 9فیصد سے صوبے کو ترقی نہیں دیا جاسکتا ۔

صوبائی وزراءسردار اسلم بزنجو ‘حامد اچکزئی اور پشتونخوامیپ کے رکن صوبائی اسمبلی نصراللہ زہرے نے وفاقی پی ایس ڈی پی میں بلوچستان کیلئے خاطر خواہ رقم نہ رکھنے پرافسوس کا اظہار کیا، صوبائی اسمبلی کا اجلاس جمعرات کی سہ پہر تین بجے تک کے لئے ملتوی کردیا گیا۔

 

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top