بلوچستان نے شیعہ زائرین کی نقل وحمل پرپابندی لگادی -
The news is by your side.

Advertisement

بلوچستان نے شیعہ زائرین کی نقل وحمل پرپابندی لگادی

کوئٹہ:بلوچستان کے محمکہ داخلہ نے اہلِ تشیع زائرین پرمحکمے کے متعلقہ حکام سے اجازت حاصل کئے بغیرنقلِ و حمل پر پابندی عائد کردی ہے۔

تفصیلات کے مطابق محکمہ داخلہ بلوچستان نے زائرین کی نقل وحرکت پر فوری پابندی عائد کرتے ہوئے کمشنر کوئٹہ ڈویژن کو اس سلسلے میں فوکل پرسن مقرر کیا ہے اور زائرین کی نقل وحرکت کے لئے فوکل پرسن کو اطلاع دینا ضروری قرار دیا ہے۔

بلوچستان شیعہ کانفرنس نے زائرین کی نقل وحرکت پرپابندی کی مذمت کرتے ہوئے اسے فی الفورختم کرنے کا مطالبہ کیا ہے۔

،کوئٹہ میں پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے بلوچستان شیعہ کانفرنس کے رہنما سید مسرت آغا کا کہنا تھا کہ محکمہ داخلہ بلوچستان کی جانب سے بلوچستان شیعہ کانفرنس کو جاری کئے جانے والے مراسلے میں ہدایت کی گئی ہے کہ زائرین کی نقل وحرکت زیادہ ہونے کے باعث ان کی سیکورٹی ممکن نہیں ہے۔

مراسلے میں زائرین کو ہدایت کی گئی ہے کہ وہ دیگر صوبوں سے کوئٹہ آنے کے لئے حکومت بلوچستان کی جانب سے مقرر کئے جانے والے فوکل پرسن سے رابطہ کریں۔

انہوں نے یہ بھی کہا کہ خیبر پختونخواسے بلوچستان آنیوالی زائرین کی بائیس بسیں دانہ سربارڈر ژوب اوردس بسوں کو سندھ بلوچستان سرحد کے مقام پر بلوچستان میں داخل ہونے سے روک دیا گیا ہے۔

آغا مسرت نے کہا ہے کہ صوبائی حکومت کوئٹہ میں پھنسے زائرین کی پچپن بسوں کی روانگی کا انتظام کرے اوراگرحکومت نے سیکورٹی کیلئے انتظام نہ کیا تو زائرین کو سیکورٹی کے بغیرروانہ کریں گے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں