The news is by your side.

Advertisement

درون نیشنل پارک میں دیکھنے کے لیے کیا کچھ ہے؟

بلوچستان فطری حُسن اور دل فریب مناظر کے ساتھ کئی تاریخی مقامات کے لیے بھی شہرت رکھتا ہے۔

بلوچستان میں متعدد تفریح گاہیں ہیں جو سیاحوں کو اپنی جانب کھینچتی ہیں۔ ان میں مشہور علاقہ زیارت، درون نیشنل پارک، ہزار گنجی، چلتن نیشنل پارک، قدرتی حُسن سے مالا مال ہر بوئی جنگلات، ہنگول نیشنل پارک وغیرہ قابلِ ذکر ہیں۔

ہم درون نیشنل پارک کی بات کریں تو یہ لسبیلہ سے مغرب میں 115 کلومیٹر کے فاصلے پر ہے۔ اس نیشنل پارک کی سب سے اونچی چوٹی کا نام ”سرکوہ“ ہے، جس کی بلندی 5185 فٹ ہے۔

اسی چوٹی پر کسی زمانے میں ایک اونچا ٹاور بنایا گیا تھا جس پر کھڑے ہو کر لسبیلہ اور کراچی کا کچھ علاقہ بھی دیکھا جاسکتا ہے۔

یہ ٹاور اب خستہ ہو چکا ہے۔ 1988 میں حکومتِ بلوچستان نے اس مقام کو نیشنل پارک کی حیثیت دے دی تھی۔ یہاں حیوانات اور نباتات کی مختلف اقسام کو قدرتی ماحول میں پروان چڑھنے کا موقع دیا گیا اور ان کی افزائشِ نسل کی گئی۔

درون نیشنل پارک میں عام جانور جیسے پہاڑی بکرے، خرگوش، جنگلی بلیاں وغیرہ دیکھی جاسکتی ہیں، اسی طرح چنکارہ ہرن، مور، چیتے، بھڑیے، چیتا بلی، لومڑی، گیڈر، اڑیال بھی پھرتے نظر آتے ہیں۔

درختوں پر خوب صورت کبوتر، چڑیا، توتے کے علاوہ تیتر، سیسی، کوہی جیسے پرندے بھی نظر آجاتے ہیں۔ اسی طرح اژدھے، زہریلے سانپ اور دیگر موذی حشرات بھی اس پارک میں دیکھے جا سکتے ہیں۔ یہاں مختلف چشموں میں آبی نباتات کے علاوہ مچھلی و دیگر جاندار بھی پائے جاتے ہیں۔

درون نیشنل پارک سے دل چسپ قصے اور مختلف پُراسرار واقعات بھی منسوب ہیں جسے مقامی لوگ یہاں آنے والے سیاحوں کو سناتے ہیں اور یوں ان کی دل چسپی اور توجہ حاصل کرتے ہیں۔

fb-share-icon0
Tweet 20

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں