The news is by your side.

Advertisement

ترک صدر کا بڑا قدم، ایک اور اہم عہدے دار فارغ

انقرہ: ترک صدر رجب طیب اردوان نے محض 10 دس بعد مرکزی بینک کے ڈپٹی گورنر کو بھی عہدے سے فارغ کر دیا۔

تفصیلات کے مطابق 20 مارچ کو ترک صدر نے مرکزی بینک کے سربراہ ناصی اگبل کو اچانک عہدے سے برطرف کر دیا تھا، آج انھوں نے نائب گورنر مراٹ جینتاکایا کو بھی ہٹا دیا ہے۔

غیر ملکی میڈیا رپورٹس میں کہا گیا ہے کہ نائب گورنر کو منگل کو آدھی رات کے بعد ملازمت سے برخاست کیا گیا۔

مراٹ جینتاکایا استنبول اسٹاک ایکس چینج میں تجربہ کار بینکر تھے، جنھوں نے مرکزی بینک میں 2019 میں ملازمت کا آغاز کیا تھا، ان کی جگہ مصطفیٰ دمن کو مرکزی بینک کا نائب گورنر مقرر کیا گیا ہے۔

مصطفیٰ دمن امریکی ملٹی نیشنل انویسٹمنٹ بینکنگ کمپنی کے سابق رکن رہ چکے ہیں۔

بینک سربراہ کی برطرفی : ترک کرنسی کی قدر میں نمایاں کمی

خیال رہے کہ مرکزی بینک کے اصلاح پسند گورنر ناصی اگبل کو برطرف کرنے پر عالمی منڈی میں حیرت کی لہر دوڑ گئی تھی، اور ترک کرنسی لیرا کی قدر میں 15 فی صد گراوٹ بھی دیکھی گئی، تاہم ترک صدر نے انھیں افراط زر کی شرح 16 تک پہنچنے پر ان کے عہدے سے ہٹایا تھا۔

واضح رہے کہ ترک صدر نے سال 2019 کے وسط سے لے کر اب تک مرکزی بینک کے 3 سربراہان کو ان کے عہدوں سے اچانک برطرف کیا ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں