The news is by your side.

Advertisement

بینک سے قرضہ لینے والے ملزمان کیخلاف سزا کا فیصلہ برقرار

کراچی : عدالت نے جعلی دستاویزات پر بینک سے قرضہ لینے والے ملزمان کی سزا کیخلاف اپیل مسترد کردی۔

سندھ ہائی کورٹ میں جعلی دستاویزات پر بینک سے قرضہ لینے والے ملزمان کی اپیل پر سماعت ہوئی جس میں عدالت نے ماتحت عدالت کا فیصلہ برقرار رکھا۔

اپیل کی سماعت کے بعد عدالت نے ماتحت عدالت کا فیصلہ برقرار رکھتے ہوئے ملزمان کی اپیلیں مسترد کردیں۔

پیشی پر آئے ہوئے کمرہ عدالت میں موجود6ملزمان کو فوری طور پرحراست میں لے لیا گیا، سمیع، محمد اشرف، آفتاب احمد سمیت تمام ملزمان ضمانت پر آزاد تھے۔

پولیس کے مطابق مذکورہ ملزمان نے بینک سے قرضہ لینے کے لئے جائیدادوں کے جو دستاویزات گارنٹی کے طور پر جمع کرائیں وہ تمام جعلی تھیں۔

ماتحت عدالت نے ملزمان کو7سال قید وجرمانے کی سزا سنائی تھی، اپیلٹ بینچ نے7سال کی سزا میں کمی کرتے ہوئے 3سال میں تبدیل کردی۔

Comments

یہ بھی پڑھیں