بی اے پی کی پارلیمانی گروپ کا غیررسمی اجلاس، جام کمال پارلیمانی لیڈر نامزد
The news is by your side.

Advertisement

بی اے پی کی پارلیمانی گروپ کا غیررسمی اجلاس، جام کمال پارلیمانی لیڈر نامزد

اسلام آباد: بلوچستان عوامی پارٹی (بی اے پی) کی پارلیمانی گروپ کا اسلام آباد میں غیر رسمی اجلاس ہوا جس میں پارٹی صدر جام کمال کو پارلیمانی لیڈر نامزد گردیا گیا۔

تفصیلات کے مطابق بی اے پی کی پارلیمانی گروپ کے اس اجلاس میں اہم فیصلے کیے گئے، میر عبدالقدوس بزنجو کو اسپیکر بلوچستان اسمبلی نامزد کردیا گیا ہے۔

پارٹی ترجمان کے مطابق اجلاس میں بی اے پی کے صدر جام کمال کو پارلیمانی لیڈر نامزد کیا گیا ہے، جبکہ میر عبدالقدوس بزنجو اسپیکر بلوچستان اسمبلی ہوں گے۔

ترجمان کا کہنا ہے کہ آج پارٹی اجلاس میں جام کمال کے نام کا باضابطہ اعلان کیا جائے گا، امید ہے جام کمال اتفاق رائے سے قائد ایوان منتخب ہوں گے۔

ترجمان بی اے پی کا یہ بھی کہنا تھا کہ جام کمال معاشی حالات سے نمٹنے کے لیے سب سے بہتر چوائس ہیں، ایم ایم اے نے بھی جام کمال کی حمایت کا عندیہ دیا ہے۔

واضح رہے کہ بلوچستان میں بی اے پی 15 نشستوں کے ساتھ سرفہرست ہے جب کہ ایم ایم اے 9 نشستوں کے ساتھ دوسرے، بی این پی مینگل 6 نشستوں کے ساتھ تیسرے اور آزاد امیدواروں نے بھی 5 نشستیں حاصل کی ہیں، جبکہ حکومت سازی کے لیے بی این پی نے بلوچستان عوامی پارٹی کے صدر جام کمال کی حمایت کا اعلان کیا ہے۔

جام کمال نے اس ضمن میں‌ دو روز قبل یہ کہا تھا کہ آزاد اور اتحادی جماعتوں کے ساتھ سادہ اکثریت حاصل ہوچکی ہے، ہم نے مرکز میں پی ٹی آئی کی غیر مشروط حمایت کا اظہار کیا ہے۔


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں۔ مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہنچانے کے لیے سوشل میڈیا پر شیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں