The news is by your side.

Advertisement

حکومت مجھے بلیک میل کر رہی ہے، میں ڈرنے والوں میں سے نہیں، عمران خان

برمنگھم : پاکستان تحریک انصاف کے چیئرمین عمران خان نے کہاہے کہ حکومت مجھے بلیک میل کر رہی ہے لیکن میں ڈرنے والوں میں سے نہیں ہوں۔

انہوں نے کہا کہ میں نے برطانیہ میں آج تک اتنا بڑا جلسہ نہیں دیکھا، ان خیالات کا اظہار انہوں نے بر منگھم میں جلسے سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔

چیئر میں پی ٹی آئی کا کہنا تھا کہ جمہوریت میں شفافیت ہوتی ہے کہ عوام حکمرانوں کا احتساب کر سکیں ،پاناما لیکس پر آزاد جوڈیشل کمیشن بنانے کے لیے حکومت کو موقع دیں گے۔

پاناما لیکس کے الزامات کا جواب دینے کی بجائے حکمرانوں نے پاکستان کے سب سے بڑے خیراتی ادارے پر الزامات کی بوچھاڑ کردی لیکن اب ایسا نہیں ہوگا کہ وزیر اعظم کرپشن کے ذریعے ملک لوٹ لے اور اس کی پکڑ نہ ہو۔

عمران خان کا کہنا تھا کہ پاناما لیکس پر وزیر اعظم نواز شریف کو بھی پارلیمنٹ کے سامنے اپنے صفائی پیش کرنا چاہیے تھی لیکن انہوں نے ٹی وی پر آکر قوم کو اپنا رونا سنایا۔

عمران خان نے کہا کہ پاکستان میں بے شمار قررتی وسائل ہیں لیکن حکمرانوں کی بے حسی کی وجہ سے آج ہم دنیا کے ترقی یافتہ ممالک کی نسبت بہت پیچھے ہیں ۔

عمران خان کا مزید کہنا تھا کہ برطانیہ میں کبھی بھی مارشل لاء لگانے کی ضرورت نہیں پڑی کیونکہ اگر یہاں ٹرین حادثہ ہو جائے تو وزیر مستفی ہو جاتا ہے ۔برطانیہ میں حکومت اخلاقیات پر کی جاتی ہے لیکن ہمارے حکمرانوں میں تو اخلاقیات نام کی کوئی چیز نہیں ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ انصاف کا مطلب یہ ہے کہ ہر کوئی قانون کو جواب دہ ہے، یہ نہیں کہ وزیراعظم ٹیکس چھپائے اور اسے کوئی نہ پکڑ سکے۔

جمہوریت میں لیڈر شپ ڈنڈے کے زور نہیں مورل اتھارٹی پر ہوتی ہے۔ نواز شریف پاناما لیکس معاملے پر جواب دینے کے بجائے دوسروں پر حملے کر رہے ہیں۔

ان کا کہنا تھا کہ اوورسیز پاکستان کے لیے سب سے زیادہ قیمتی ہیں۔ بیرون ملک رہنے والے پاکستانی اپنی محنت کا پیسہ پاکستان بھیجتے ہیں جس کی وجہ سے پاکستان چل رہا ہے۔ انہوں نے کہا کہ میں اوورسیز پاکستانیوں کے ووٹ کے لیے پوری جدوجہد کروں گا۔

 

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں