The news is by your side.

Advertisement

گلے میں پھنسی بیٹری کے ساتھ بچی معجزانہ طور پر زندہ

گلے میں پھنسی بیٹری کے ساتھ بچی نے معجزانہ طور پر 4 ماہ گزار لیے۔

بین الاقوامی میڈیا رپورٹس کے مطابق 11 ماہ کی بچی نے غلطی سے ایک چھوٹی سی بیٹری جس کا سائز ایک بٹن کے برابر تھا گلے میں پھنسا لی۔

X-ray showing battery in throat

ابتدا میں بچی کو کھانے میں دشواری کا سامنا کرنا پڑا تو ڈاکٹرز نے بغیر تحقیق کے وائرل انفیکشن یا گلے میں معمولی درد سمجھ کر دوا دی جس سے وقتی طور پر بچی کو آرام آیا لیکن وہ مستقل پریشانی میں مبتلا رہی۔

والدین کی تشویش بڑھی تو سرجن نے بچی کا معائنہ کیا اور گلے کا ایکسرے کیا جس میں ڈاکٹر گلے میں پھنسی کوئی ٹھوس چیز دیکھ کر حیران رہ گیا۔

Sofia-Grace Hill in hospital

ڈاکٹر نے فوری طور پر آپریشن کرنے کا فیصلہ کیا اور والدین کی اجازت کے بعد دو گھنٹے کے کامیاب آپریشن کے ذریعے بیٹری کو نکال کر بچی کی تکلیف دور کر دی۔

Button battery

ڈاکٹر کا کہنا ہے کہ بیٹری آہستہ آہستہ غذا کی نالی کی طرف بڑھ رہی تھی جو کہ انتہائی خطرناک ہو سکتا تھا۔ آپریشن کے بعد بچی کے منہ کو ٹیپ لگا کر بند کر دیا گیا ہے اور ناک سے نالی کے ذریعے اسے غذا دی جارہی ہے۔

Dad's Warning After Girl, 4, Has 10p-size Battery Stuck In Her Throat For FOUR  MONTHS

Dad's warning as button size battery removed from toddler's throat after four  months - Mirror Online

Comments

یہ بھی پڑھیں