The news is by your side.

Advertisement

بی بی سی کے اینکر سے درخواست ہے دیگر لوگوں کو بھی انٹرویو میں بلائیں: علی زیدی

کراچی: وفاقی وزیر برائے بحری امور علی زیدی کا کہنا ہے کہ اس کا شکر گزار ہوں جس نے اسحاق ڈار کا انٹریو ہارڈ ٹاک میں کرایا، اینکر اسٹیفن سکر سے درخواست ہے دیگر لوگوں کو بھی بلائیں۔

تفصیلات کے مطابق سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر علی زیدی نے ٹوئٹ کیا کہ اس بیوقوف کو تاج پہناؤں گا جس نے اسٹیفن سکر کے سامنے بیٹھنے پر اسحاق ڈار کو راضی کیا۔ مریم، حسین، حسن نواز اور علی عمران کو بھی بی بی سی کے ہارڈ ٹاک انٹرویو میں بلانا چاہیے۔

انہوں نے لکھا کہ شاہد خاقان عباسی اور بلاول بھٹو کو بھی پروگرام میں ضرور بلائیں۔

وفاقی وزیر علی زیدی کا کہنا تھا کہ حیران ہوں بی بی سی جیسے ادارے نے مفرور شخص کو شو میں کیسے بیٹھنے دیا، اسحاق ڈار کو انصاف کے کٹہرے میں ضرور لایا جائے گا چاہے وہ اسکرین پر کچھ بھی کرلیں۔

خیال رہے کہ پاکستان مسلم لیگ نواز کے رہنما و سابق وزیر خزانہ اسحاق ڈار برطانوی نشریاتی ادارے (بی بی سی) کے پروگرام ہارڈ ٹاک میں اینکر کے سوالات پر ڈھیر ہوگئے، اینکر نے جائیداد سے متعلق سوال کیا تو سابق وزیر خزانہ نے بیرون ملک جائیدادوں سے انکار کردیا۔

اینکر کے سوالات پر پاکستان سے مفرور اسحاق ڈار سٹپٹاگئے

اسحاق ڈار کی توجیحات پیش کرنے کے باوجود اینکر نے پھر سوال کیا کہ اگر آپ کی ایک جائیداد، اکاونٹس کلیئر ہیں تو واپس جاکر کیسز کا سامنا کیوں نہیں کرتے؟ جس پر انہوں نے کہا کہ ’میری طبعیت خراب ہے علاج کے لیے آیا ہوں‘۔

بی بی سی اینکر نے طبعیت کا سن کر سوال کیا کہ آپ برطانیہ میں تین سال سے ہیں؟ اب بھی واقعی بیمار ہیں۔ اینکر کے تابر توڑ سوالات پر اسحاق ڈار نے کہا کہ جی مجھے اب بھی تکلیف ہے، دیکھیں آگے کیا ہوتا ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں