The news is by your side.

Advertisement

ضمنی انتخابات 2018: ووٹر کے لیے خصوصی ہدایات

الیکشن کمیشن نے ماضی کی طرح آج کے ضمنی انتخابات میں بھی ووٹرز کے لیے بھی ضروری ہدایات جاری کی ہیں، ووٹر کے لیے ان ہدایات پرعمل کرنا لازم ہے۔

تفصیلات کے مطابق ملک بھر میں قومی اور صوبائی اسمبلی کی 35 نشتوں پرضمنی انتخابات کے لیے پولنگ کا عمل جاری ہے۔قومی اسمبلی کی 11 اور صوبائی اسمبلی کی 24 نشتوں پرضمنی انتخابات کے لیے پولنگ کا عمل صبح 8 بجے سے شام 5 بجے تک بلا تعطل جاری رہے گا۔

ضمنی انتخابات میں قومی اور پنجاب اسمبلی کی 11 نشستوں کے ساتھ خیبرپختونخواہ اسمبلی کی 9، سندھ اور بلوچستان کی 2،2 نشستوں پرووٹنگ ہوگی اور 600 سے زائد امیدوار انتخابات میں حصہ لے رہے ہیں۔

الیکشن کمیشن کے مطابق مجموعی طور پر35 حلقوں میں 92 لاکھ 93 ہزار 74 ووٹرز اپنا حق رائے دہی استعمال کریں گے جن کے لیے 7 ہزار 489 پولنگ اسٹیشن بنائے گئے ہیں جبکہ ایک ہزار727 پولنگ اسٹیشن کو حساس قرار دیا گیا ہے۔

ووٹرکے لیے ضروری ہدایات


الیکشن کمیشن نے ووٹرز کے لیے ضروری ہدایات جاری کی ہیں، اگر آپ کے حلقے میں انتخابات ہورہے ہیں تو ان ہدایات سے باخبر ہونا آپ کے لیے ضروری ہے۔

الیکشن کمیشن کے مطابق پولنگ کے دوران غیر جانبدار، پریزائیڈنگ افسر کے قانونی حکم کی تعمیل کریں۔

انتخابی عملہ یا سیکیورٹی اسٹاف کسی کو ووٹ ڈالنے کی ترغیب نہیں دے سکتے۔

الیکشن کمیشن کا کہنا ہے کہ ووٹ ڈالنے کے لیے اصل قومی شناختی کارڈ ہمراہ لائیں۔ زائد المیعاد قومی شناختی کارڈ قابل قبول ہے، فوٹو کاپی قابل قبول نہیں ہوگی۔

ووٹرز اور انتخابی عملہ ووٹ کی رازداری کا خیال رکھیں۔

بیلٹ پیپر پر نشان لگانے کے لیے پولنگ حکام کی فراہم کردہ مہر استعمال کریں۔

پولنگ اسٹیشن کے اندر موبائل فون اور کیمرہ لانے کی اجازت نہیں ہوگی۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں