The news is by your side.

Advertisement

انکل الطاف کراچی کی حقیقت ہیں اور رہیں‌ گے، بلاول بھٹو

اسلام آباد : پاکستان پیپلز پارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹو زرداری نے کہا ہے کہ مولانا فضل الرحمٰن میرے انکل ہیں میں نے مولانا فضل الرحمٰن سے پاناما لیکس پر حمایت کی درخواست کی ہے،نواز شریف اور انکل الطاف سمیت کسی کو کبھی غدار نہیں کہا۔

یہ بات انہوں نے جمیعت علماء پاکستان کے سربراہ مولانا فضل الرحمٰن سے ان کی رہائش گاہ پر وفد کی شکل میں ملاقات کے بعد میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہی۔وفد میں فرحت اللہ بابر اور جمیل سومرو بھی شامل تھے۔

بلاول بھٹو نے کہا کہ مولانا فضل الرحمٰن میرے انکل ہیں، میں جب چھوٹا تھا جب بھی میں ان سے ملاقات کرتا تھا میں نے ان سے پاناما لیکس پر پیش کیے جانے والے بل کی حمایت کی درخواست کی ہے۔

الطاف حسین سے متعلق پوچھے گئے سوال پر ان کا کہنا تھا کہ میں نے ساری زندگی متحدہ کے قائد انکل الطاف کو کبھی غدار نہیں کہا، وہ کراچی کی سیاسی حقیقت تھے اور ہیں۔

نواز شریف سے متعلق انہوں نے کہا کہ میڈیا والے بھی کمال کرتے ہیں، نوازشریف کو کبھی غدار نہیں کہا، وزیراعظم سے خارجہ پالیسی اور بہت سے معاملات پراختلافات ہیں، لیکن انہیں بھی کبھی غدار نہیں کہا، تاہم بیٹی کی شادی پر نریندرمودی بلانا غلط عمل تھا۔

بلاول زرداری نے واضح طور پر کہا کہ نوازشریف اس ملک کے منتخب وزیر اعظم اور محب وطن سیاست دان ہیں۔

مائنس ون کے سوال پر بلاول بھٹو نے کہا کہ مائنس ون فارمولا پاکستان میں ہمیشہ سے رہا ہے، مانئنس ون کا مطالبہ کرنے والے سازشوں پر یقین رکھتے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ میرے نانا شہید ذوالفقار علی بھٹو، میرے ماموں شاہنواز بھٹو، مرتضیٰ علی بھٹو، پھر بی بی شہید کو مائنس کیا گیا، اب کہتے ہیں آصف زرداری کو مائنس کردو، کل کہیں گے بلاول کو بھی نکال دو، میں اب اس معاملے پر کیا کہوں؟

ان کا کہنا تھا کہ آصف زرداری کو مائنس کرنے والی بات عمران خان کےمنہ سے نکلی جس سے بہت غلط پیغام گیا۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں