The news is by your side.

Advertisement

بیک ڈور ڈپلومیسی پر بلاول بھٹو کے تحفطات، اے پی سی کی اندرونی کہانی

اسلام آباد : اپوزیشن جماعتوں کی آل پارٹیز کانفرنس میں مولانا فضل الرحمان کی بیک ڈور ڈپلومیسی پر بلاول بھٹو نے سوالات اٹھا دیئے۔

مولانا نے کہا کہ ہم سیاسی لوگ ہیں کسی پر دروازے بند نہیں کر سکتے، بلاول بھٹو بولے ہم ساتھ چل رہے ہیں ہر معاملے پر اعتماد میں لینا ضروری تھا۔

تفصیلات کے مطابق مولانا فضل الرحمان کی کل جماعتی کانفرنس کی اندرونی کہانی سامنے آگئی، اسلام آباد میں مولانا فضل الرحمٰن کی زیر صدارت کل جماعتی کانفرنس میں مولانا نےاپوزیشن قیادت کو بیک ڈور ڈپلومیسی سے آگاہ کیا۔

ذرائع کے مطابق مولانا کا کہنا تھا کہ مجھ سے اگلےسال بجٹ تک کا وقت مانگا گیا، پھر میرے انکار پر آئندہ سال اپریل تک کا وقت مانگا گیا، دوبارہ انکار پر بات دسمبر یا جنوری تک پہنچی۔

انہوں نے بتایا کہ انہیں قومی حکومت یا ایوان کے اندر تبدیلی کی پیشکش بھی کی گئی، بلاول بھٹو نے کہا کہ ان ہاؤس تبدیلی پرحکمراں اتحاد کا ہی وزیراعظم آگیا تو کیا ہوگا، کیا ضمانت ہے کہ ایک کے بعد اسی کا کوئی دوسرا نمائندہ نہیں ہوگا۔

جس پر اپوزیشن جماعتوں نے ان ہاؤس تبدیلی کا آپشن مسترد کرتے ہوئے فیصلہ کیا کہ اپوزیشن اب صرف نئے انتخابات پر کا مطالبہ کرے گی۔

فضل الرحمٰن کی ملاقاتوں پر بلاول زرداری کے تحفظات پر فضل الرحمٰن نے کہا کہ ان ملاقاتوں میں دوٹوک موقف تھا واضح بات کی گئی ، اپنےمؤقف پرقائم تھے ہیں اور رہیں گے۔

fb-share-icon0
Tweet 20

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں