The news is by your side.

Advertisement

پیپلزپارٹی وفاق میں حکومت بنائے گی، بلاول بھٹو

اسلام آباد: پاکستان پیپلزپارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹو زرداری نے کہا ہے کہ 2018 کے انتخابات وقت پر ہوں گے اور پی پی آئندہ الیکشن میں بھاری اکثریت سے کامیابی حاصل کر کے وفاق میں حکومت بنائے گی۔

ان خیالات کا اظہار انہوں نے اسلام آبادمیں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کیا، بلاول بھٹو کا کہنا تھاکہ ہمیں عوام کے ساتھ رہنا اور اُن کےتمام مسائل حل کرنے ہیں، 9 ماہ نے پیپلزپارٹی نے 5 نئے اسپتال قائم کیے جہاں مریضوں کو مفت علاج کی سہولت فراہم کی جارہی ہے۔

پیپلزپارٹی کے چیئرمین کا کہنا تھا کہ مسلم لیگ ن کی حکومت عوامی مسائل پر بات نہیں کررہی بلکہ اُن کے قائد عدالتی فیصلے پر مجھے کیوں نکالا کررہے ہیں، 5 سال حکومت کرنے والوں نے پی آئی اے کو پروائیوٹ کیوں نہیں کیا؟۔

بلاول بھٹو کا کہنا تھا کہ نوازشریف ماضی میں بے نظیر بھٹو کو جیل بھیجنے کے لیے ججز کو دھمکیاں دیتے تھے، انہوں نے میری والدہ بی بی شہید کے خلاف جعلی مقدمات بنوائے، پی پی چیئرمین کا کہنا تھا کہ نوازشریف نے پارلیمنٹ کو مضبوط نہیں کیا، پانچ سال کے دوران میاں صاحب 4 بار قومی اسمبلی اور 2 بار سینیٹ اجلاس میں شریک ہوئے۔

اُن کا کہنا تھا کہ ملک کی خارجہ پالیسی مشکلات سے دوچار ہے جبکہ معاشی حالت بتدریج ابتر ہوتی جارہی ہے پھر بھی حکومت کیوں نکالا کے پیچھے لگی ہوئی ہے، عوام کو بنیادی ضروریات فراہم کرنا حکومت کا کام ہے عوام کو اس سے غرض نہیں کہ نوازشریف کو کیوں نکالا گیا۔

بلاول بھٹو کا کہنا تھا کہ  مسلم لیگ ن اس طرح کے اقدامات سے ملک کو خطرے میں ڈالنا چاہتی ہے مگر ہم ایسا نہیں ہونے دیں گے، امید ہے پیپلزپارٹی سینیٹ انتخابات میں توقع سے زائدنتائج حاصل کرے گی اور ہم آئندہ وفاق میں حکومت بنائیں گے۔

پیپپلزپارٹی کے چیئرمین کا کہنا تھا کہ دنیا میں بسنے والے تمام مسلمانوں کو محفوظ دیکھنا چاہتے ہیں کیونکہ اگر مسلمان محفوظ نہیں ہوئے تو یہ انصاف اور اسلام کے خلاف ہوگا اسی طرح ہمیں ملک میں بسنے والی اقلیتوں کو بھی محفوظ بنانا ہوگا۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں