The news is by your side.

Advertisement

الیکشن کمیشن کے سامنے احتجاج میں بلاول کا شرکت نہ کرنے کا فیصلہ، وجہ سامنے آ گئی

کراچی: پاکستان پیپلز پارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹو زرداری نے الیکشن کمیشن کے سامنے احتجاج میں شرکت نہ کرنے کا فیصلہ کر لیا ہے۔

ذرائع کے مطابق بلاول نے الیکشن کمیشن کے سامنے احتجاج میں شرکت نہ کرنے کا فیصلہ کیا ہے، جس پر یہ سوال اٹھایا گیا ہے کہ کیا اس فیصلے کی وجہ پی ڈی ایم فیصلوں سے بے زاری ہے یا پھر اسلام آباد جانے سے گریز؟

پی پی ذرائع کا کہنا ہے کہ الیکشن کمیشن کے سامنے احتجاج میں پیپلز پارٹی کا وفد شرکت کرے گا، بلاول 18 جنوری کو سکھر میں ایک تقریب میں شرکت کریں گے، جب کہ 19 جنوری کو عمر کوٹ کا دورہ کریں گے، اس کے بعد پی ڈی ایم کے 23 جنوری کے سرگودھا جلسے میں شریک ہوں گے۔

واضح رہے کہ پی ڈی ایم نے 19 جنوری کو الیکشن کمیشن کے سامنے احتجاج کا اعلان کر رکھا ہے، پاکستان مسلم لیگ ن کے رہنما رانا ثنا اللہ کا کہنا ہے کہ الیکشن کمیشن کے سامنے ریلی اور احتجاج کا فیصلہ آئندہ الیکشنز میں ووٹ کو عزت دینے کے لیے کیا گیا ہے، موجودہ وزیر اعظم کے خلاف فارن فنڈنگ کیس ہے، جس پر پُر امن احتجاج میں تمام کارکنان اور ٹکٹ ہولڈرز سب شریک ہوں گے۔

دریں اثنا، بلاول بھٹو زرداری کے سندھ کے 2 روزہ دورے کا شیڈول جاری کیا گیا ہے، بلاول بھٹو سکھر مزدوروں کوگھر دینے کی اسکیم کا افتتاح کریں گے اور مزدوروں میں فلیٹ کی چابیاں تقسیم کریں گے۔

پی پی چیئرمین 18 جنوری کے عمر کوٹ میں ضمنی انتخابات کے بعد جلسہ کریں گے، اور 19 جنوری کو عمر کوٹ میں علی مردان شاہ کی برسی میں شرکت کریں گے، جب کہ بلاول بھٹو کا 19 جنوری کو اسلام آباد جانے کا کوئی شیڈول نہیں۔

دوسری طرف 19 جنوری کو پی ڈی ایم کی جانب سے الیکشن کمیشن کے سامنے دھرنا دیا جائے گا، جس میں پیپلز پارٹی کی مرکزی قیادت شرکت کرے گی۔

Comments

یہ بھی پڑھیں