The news is by your side.

Advertisement

پی ٹی آئی دوسری ایم کیوایم ہے، کراچی والو اب کسی کے دھوکے میں مت آنا: بلاول بھٹو

کراچی کے پاس آج منزل بھی ہے اور رہنما بھی، کراچی کے بیٹو، میرا ساتھ دو

کراچی: پی ٹی آئی کے چیئرمین بلاول بھٹو زرداری نے کہا ہے کہ پی ٹی آئی دوسری ایم کیوایم ہے، پچھلے دنوں ہمیں اس کا ثبوت بھی مل گیا.

ان خیالات کا اظہار انھوں نے مزار قائد پر پیپلزپارٹی کے جلسے سے خطاب کرتے ہوئے کیا. ان کا کہنا تھا کہ میں کارکنوں کا شکرگزار ہوں کہ دو تین دن کے مختصر عرصے میں جلسے کی تیاری کرلی، ہمیں کوئی بھی اپنے شہیدوں کو خراج عقیدت پیش کرنے سے نہیں روک سکتا.

انھوں نے کہا کہ پی ٹی آئی والے عمران خان کی صورت میں نیا بانی متحدہ تلاش کریں، پی ٹی آئی والوں نے گذشتہ دنوں اپنے کیمپ سے ہم پر پتھراؤ کیا، کیمپ جلایا، حکیم سعید گراؤنڈ میں ہماری تیاری چل رہی تھی، اچانک پی ٹی آئی نے حکیم سعید گراؤنڈ میں اپناکیمپ لگایا.

انھوں نے کہا کہ پی ٹی آئی کےشرمناک عمل کے باوجود کراچی کے امن کو ترجیح دی، ہم نے پی ٹی آئی کو حکیم سعید گراؤنڈ میں جلسے کی دعوت دی، کراچی ہمارا ہے، ہم تو کہیں بھی جلسہ کرسکتے تھے.


بارہ مئی 2007 کا ذمے دار کون؟

بلاول بھٹو زرداری نے کہا کہ 12 مئی کومشرف کے حواریوں نے ہمارے نہتے کارکنان کو شہید کیا، ڈکٹیٹر ہنس رہا تھا اور کراچی میں لاشیں گررہی تھیں، پی پی جیالے اس وقت کے چیف جسٹس کے استقبال کو جارہے تھے، ڈرگ روڈ فلائی اوور پر پی پی قیادت پر چاروں طرف سے گولیاں برسائی گئیں، ہمارے چھ جیالے جاں بحق ہوئے تھے، اس دن 58 لوگ شہید ہوئے۔

انھوں نے کہا کہ 12 مئی کے  وقت براہ راست امن کے ذمے دارموجودہ میئرکراچی تھے، ان سے سوال ہونا چاہیے، ہم اداروں کے وقار اور آزاد عدلیہ کے لئے نکلے تھے، جن کے لئے 58 افراد نے جانیں دیں، انھوں نے شہدا کے گھروں پر آنے کی بھی زحمت نہ کی۔ بلاول بھٹو نے سانحے کے متاثرین کو انصاف دینے کا مطالبہ کیا۔


ایم کیو ایم نے صرف لسانیت کی سیاست کی

بلاول بھٹو نے کہا کہ ایم کیوایم والے لسانیت کے نام پر حکومت کرتے آرہے ہیں، ایم کیوایم نے 30 سال عوام سے جھوٹ بولا،  کراچی والوں کے پاس اب کھونے کےلئے کچھ بچا نہیں، کراچی کو ٹارگٹ کلنگ، لاشیں گولی، دہشت اور ہڑتالیں ملیں، بیوائیں ایم کیوایم سے سوال کرتی ہیں، بتاؤ ہمارا قصور کیا تھا،

انھوں نے کہا کہ دھوکا کس کو دیا جا رہا ہے، پہلے فاروق ستار کہتے ہیں کہ میئر کراچی اربوں کا حساب نہیں دے رہا، اب ان کا موقف بدل گیا۔ سندھ حکومت نے اربوں روپے میئر کراچی کو کھل کر کام کے لئے دیے، ایم کیوایم والے صرف ان پیسوں کی بندربانٹ کے لیے ایک ہوئے ہیں، اربوں روپے ہونے کے باوجود میئر کراچی اختیارات کا رونا رو رہا ہے۔

انھوں نے کہا کہ ایم کیوایم والے نہ تو خود کام کرتے ہیں، نہ کسی اور کو کرنے دیتے ہیں، یہ ٹنکی بھر لیڈر کہہ رہے ہیں کہ ہم لاڑکانہ سے کراچی تک حکومت کرنے نہیں دیں گے، بلاول ہاؤس کراچی میں ہے، نانا اور میری ماں بھی کراچی میں رہتے تھے، لاڑکانہ اور کراچی دونوں ہی ہمارے شہر ہیں، ایم کیوایم والے کراچی کو دو ڈسٹرکٹ تک محدود رکھنا چاہتے ہیں، کراچی کی خدمت کرتے رہیں گے اور دلوں کو جوڑیں گے۔

ان کا کہنا تھا کہ اگر مجھے خبر ہوتی کہ میرے جلسے سے لیاقت آباد میں ایم کیوایم دھڑےایک ہوجائیں، تو پہلے کر لیتا، میں نےصرف ٹنکی گراؤنڈ پر جلسہ کیا، باقی ستیاناس انھوں نے خود کیا۔


ن لیگ یا ناکام لیگ؟

انھوں نے ن لیگ پر تنقید کرتے ہوئے کہا کہ ناکام لیگ کیا جانے کہ وفاقی پارٹی کیا ہوتی ہے، وفاق کی صحیح ترجمانی اب تک صرف پیپلزپارٹی نے کی ہے، عوام کی اصل نمائندگی صرف پیپلزپارٹی کرسکتی ہے اور ہم ہی کریں گے، یہ موسمی پرندے ہیں۔


عمران خان پہلے نیا پاکستان کا منجن بیچتے رہے

 بلاول بھٹو نے کہا کہ عمران خان نے پہلے بھی عوام کو ورغلانے کی کوشش کی، اب بھی کررہے ہیں، عمران خان پہلے نیا پاکستان کا منجن بیچتے رہے، اب دونہیں ایک کا راگ الاپ رہے ہیں۔ ان کے خیبرپختونخواہ میں تعلیم، صحت، نوکریوں کا دہرا معیار ہے، کراچی والوں کسی کے دھوکے میں مت آنا، روشن مستقبل کے لیے کھڑے ہوجاؤ، یہ وقت ہے حق مانگنے کا، کراچی والوں کے پاس آج منزل بھی ہے اوررہنما بھی، کراچی کے بیٹو، میرا ساتھ دو، میری طاقت بنو۔


عمران خان کے پاس جنوبی پنجاب صوبہ بنانے کی صلاحیت نہیں، بلاول بھٹو


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں۔ مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہنچانے کے لیے سوشل میڈیا پر شیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں