The news is by your side.

Advertisement

ماننا ہوگا عدلیہ اور اسٹیبلشمنٹ سے غلطیاں ہوئیں، بلاول

لاہور : چیئرمین پاکستان پیپلز پارٹی بلاول بھٹو زرداری دورہ پنجاب میں خا صے متحرک ہیں، انہوں نے آج لاہور ہائیکورٹ بار کی تقریب میں مسلم لیگ ن کی حکومت کو آڑے ہاتھوں لیا جبکہ ساتھ ہی خیبر پختون خوا حکومت کو بھی تنقید کا نشانہ بنایا۔

لاہورمیں ہائیکورٹ بارایسوسی ایشن کی تقریب میں قومی ایکشن پلان کو ہدف تنقید بناتے ہوئے بلاول بھٹو زرادری کا کہنا تھا کہ یہ قومی ایکشن پلان نہیں ن لیگ کا ایکشن پلان ہے،عدلیہ اوراسٹیبلشمنٹ بھی چیئرمین پیپلزپارٹی کی تنقید سے بچ نہ سکی۔

انکا مزید کہنا تھا کہ ماننا ہوگا اسٹیبلشمنٹ اورعدلیہ سےغلطیاں ہوئیں۔

بلاول نے کہا کہ ملک بھر میں اکسٹھ تنظیموں پر پابندی لگائی گئی ہے، حکومت کو نہیں پتا کہ کتنی تنظیمیں کام کر رہی ہیں۔

انہوں نے الزام لگایا کہ وزیر اعلیٰ پنجاب نے طالبان سے پنجاب کو معاف رکھنے کی درخواست بھی کی، انہوں نے پنجاب اور خیبرپختونخواہ حکومت کو تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہا کہ پنجاب میں شدت پسند تنظیموں کیخلاف کارروائی نہیں کی گئی جبکہ کے پی کے میں اصلاحات کا عمل شروع نہیں کیا گیا۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں