The news is by your side.

Advertisement

بلاول بھٹو کاالیکشن میں کالعدم تنظیموں کی سپورٹ لینےوالے وزرا کو کابینہ سے الگ کرنے کا مطالبہ

کراچی : پیپلز پارٹی چیئرمین بلاول بھٹو نے الیکشن میں کالعدم تنظیموں کی سپورٹ لینے والے وزرا کو کابینہ سے الگ کرنے کا مطالبہ کرتے ہوئے کہا ایسےگروپوں سےحکومت کودوری اختیارکرنی چاہیئے، این ایس سی پارلیمنٹری کمیٹی بناکرگروپوں کیخلاف کارروائی کریں۔

تفصیلات کے مطابق پیپلز پارٹی چیئرمین بلاول بھٹو نے سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر اپنے بیان میں کالعدم تنظیموں کی الیکشن میں سپورٹ لینے والے وزرا کو وفاقی کابینہ سے الگ کرنے کا مطالبہ کردیا ہے۔

بلاول بھٹو کا کہنا تھا انتہاپسندی،کالعدم تنظیموں کی ماضی کی طرح سپورٹ نہیں کرنی چاہیے، ایسےگروپوں سے حکومت کودوری اختیارکرنی چاہیے۔

پی پی چیئرمین نے کہا ایسے وزرا کو نکالنے کے مطالبے پر مجھےاینٹی اسٹیٹ قراردےدیا، موت کی دھمکیاں اورنیب نوٹسزدئیے گئے، یہ سب کچھ ہمیں اصولی مؤقف سےنہیں ہٹا سکتے، این ایس سی پارلیمنٹری کمیٹی بناکرگروپوں کیخلاف کارروائی کریں۔

یاد رہے چند روز قبل بھی بلاول بھٹو نے مطالبہ کیا تھا کہ وفاقی حکومت 3 وزرا کو کالعدم تنظیموں سے گٹھ جوڑ پر ہٹائے، افسوس ہمارے وزیر اعظم کالعدم تنظیموں اور مودی کے خلاف کچھ نہیں کر سکتے، وہ صرف اپوزیشن کے خلاف ایکشن لے سکتے ہیں۔

مزید پڑھیں : وفاقی حکومت 3 وزرا کو کالعدم تنظیموں سے گٹھ جوڑ پر ہٹائے، بلاول بھٹو

ان کا کہنا تھا بھارت میں مودی پالیسی چل رہی ہے، اپوزیشن کو ملک دشمن قرار دو، مودی جیسی پالیسی پی ٹی آئی میں بھی چل رہی ہے، کالعدم تنظیموں کے ساتھ الیکشن ملکر لڑے گئے، 3 وزیر ہیں، ان میں سے ایک نے کالعدم تنظیموں کی حمایت کی اور ایک وزیر نے اسمبلی میں کہا کالعدم تنظیموں کے خلاف بات ملک دشمنی ہے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں