The news is by your side.

Advertisement

میاں صاحب آئین توڑنے والے کوباہرکیسے جانے دیا، بلاول بھٹو

لاڑکانہ: شہید ذوالفقار علی بھٹو کی برسی پر خطاب کرتے ہوئے بلاول بھٹو نے نواز حکومت کو آڑے ہاتھوں لیا، انہوں نے کہا کہ پرویز مشرف اور ذوالفقار علی بھٹو کیلئے عیلحدہ نظام کیوں ؟سنا ہے رمضان شوگر مل سے را کا ایجنٹ گرفتار ہوا ہے۔

ذوالفقارعلی بھٹو کی سینتیس ویں برسی کے خطاب میں پاکستان پیپلز پارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹو زرداری حکومت پر گرجتے برستے رہے،بلاول بھٹو نے کہا کہ بتایا جائے مشرف باہر کیسے گئے۔

بلاول بھٹو نے کہا کہ پاکستان میں دو نظام کیوں ہیں، پنجاب حکومت کے منصوبوں کو بھی شدید تنقید کا نشانہ بنایا، پاکستان کی تاریخ میں اتناقرض نہیں لیا گیا جتنا اس دورحکومت میں لیاگیا، غریب روٹی مانگتاہے آپ اس کوجنگلا بس دیتےہیں۔

بلاول بھٹو زرداری نے کہا کہ حکومت کی کوئی واضح پالیسی نہیں ہے، وزیرداخلہ کامنہ ایک طرف اوروزیردفاع کامنہ دوسری طرف ہے۔

بلاول بھٹو نے کہا کہ نواز شریف میں نیشنل ایکشن پلان پر عمل کرنے کی اہلیت ہی نہیں ہے،سنا ہے رمضان شوگر مل سے بھی را کے ایجنٹ پکڑے جارہے ہیں، انہوں نے کہا کہ دہشتگردی کے خلاف واضح پالیسی نہ ہونادہشتگردوں کومضبوط کررہی ہے،شہیدوں کاوارث ہوں، قسم کھاتا ہوں کہ دہشتگردوں سے لڑوں گا۔

کشمیر کے حوالے سے بلاول بھٹو کا کہنا تھا کہ کشمیروں کومخاطب کرکےکہتا ہوں کہ آپ کابلاول بہت جلد کشمیرآرہاہے،کشمیرمیں پیپلزپارٹی کامینڈیٹ چوری کرنے کی سازش ہورہی ہے،کشمیرمیں دمادم مست قلندرہوگا،پیپلزپارٹی نےہمیشہ کشمیرکےمسئلےکواقوام متحدہ میں اٹھایا۔

خطاب کے دوران بختاور بھٹو بلاول کے ہمراہ کھڑی رہی، جلسے کے بعد بلاول بھٹو نے شہید ذوالفقار علی بھٹو اوربے نظیر شہید کے مزار پر حاضری دی۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں