The news is by your side.

Advertisement

پی آئی اے کے بیڑے میں شامل ہونے والا نیا طیارہ بڑے حادثے سے بال بال بچ گیا

کراچی :  پی آئی اے کے بیڑے میں شامل ہونے والا نیا طیارہ بڑے حادثے سے بال بال بچ گیا ، طیارے کے اڑان بھرنے کے کچھ ہی دیر بعد انجن سے پرندہ ٹکرا گیا تاہم باحفاظت طیارے کو واپس کراچی ایئرپورٹ اتار لیا گیا۔

تفصیلات کے مطابق کراچی سے لاہور پی آئی اے کی پرواز پی کے 304 بڑے حادثے سے بچ گئی، ایئربس 320 کے اڑان بھرنے کے کچھ ہی دیر بعد انجن سے پرندہ ٹکرا گیا ، جس کے باعث بی ایم ایکس رجسٹریشن کے حامل طیارے کے انجن کو نقصان پہنچا لیکن کپتان نے مہارت سے طیارے کو باحفاظت واپس کراچی ایئرپورٹ اتار لیا۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ نئے طیارے کو پرندہ ٹکرانےکےباعث گراونڈکرناپڑا ، پی آئی اے نے کچھ دن قبل ایئربس320نئے طیارےکوبیڑے میں شامل کیاتھا۔

دوسری جانب ترجمان پی آئی اےعبداللہ کا کہنا ہے کہ انجن میں پرندے کی موجودگی پر5ملین ڈالرزکے ممکنہ نقصان کااندیشہ ہے، سی اے اے کی نااہلی سے نئے طیارے سے پرندہ ٹکرایا، سی اے اے کو ایئرپورٹ کے اطراف کچرے کی موجودگی سے آگاہ کیاتھا تاہم حکام نے کوئی شنوائی نہیں کی۔

مزید پڑھیں : پرندہ ٹکرانے سے نجی طیارے کی پرواز بڑے حادثے سے بال بال بچ گئی

یاد رہے گذشتہ روز باچا خان ایئرپورٹ پشاور پر نجی ایئر لائن کی پرواز ای آر 550 سے ایک پرندہ ٹکرا گیا تھا، پرندہ ٹکرانے کی وجہ سے طیارے کے دائیں انجن کو نقصان پہنچا طیارہ لڑکھڑانے کے باوجود کپتان نے کمال مہارت سے طیارے کو بحفاظت زمین پر اتار لیا تھا۔

خیال رہے اگر جہاز سے پرندہ ٹکرا جائے تو یہ بات کوئی معمولی نہیں ہوتی بلکہ بڑے حادثے کا سبب بنتی ہے، دنیا بھر کے ایئر پورٹس کی سول ایو ایشن انتظامیہ رن وے سے پرندوں کو دور رکھنے کے لیے برڈ شوٹر تعینات بھی کرتی ہے تاکہ جہازوں کو حادثات سے محفوظ رکھا جاسکے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں