The news is by your side.

اردو بلاگز

قیس سعید، اسرائیل اور غداری کا مقدمہ!

تحریر: ملک شفقت اللہ 1957 تیونس کی آزادی کا سال تھا۔ اس وقت سے لے کر 2011 تک دو شخصیات ہی ریاست اور قوم کی قسمت کے فیصلے کرتی رہیں۔ پہلے حبیب ابو رقیبہ اور پھر زین العابدین بن علی نے حکم رانی کی۔ 14 جنوری 2011 کو عوامی تحریک کے…

بابری مسجد:عدالتی فیصلہ اور پسِ پردہ حقائق

تحریر: ملک شفقت اللہ دسمبر کا مہینہ، سن 1992 جب بابری مسجد کو شہید کیا گیا۔ وہاں اس وقت بھی وہ مورتیاں موجود تھیں جو 1949 میں اسی مہینے میں ایک رات زبردستی وہاں لا کر رکھی گئی تھیں۔ اس واقعے کے بعد انتظامیہ نے مسجد کو مقفل کر دیا…

ٹماٹر سے آگے جہاں اور بھی ہیں!

تحریر: نادیہ حسین بڑھتی ہوئی سردی نے باورچی خانے میں چولھے اور در و دیوار کو ابھی ٹھنڈا کرنا شروع ہی کیا تھا کہ اچانک ٹماٹر کی آسمان کو چھوتی ہوئی قیمت نے اسے پھر گرما دیا۔ ان دنوں ہر طرف یہی زیرِ بحث ہے کہ ٹماٹر کی قیمت تین سو روپے…

بھارت تو پروپیگنڈا کرے گا، ہم کیا کریں گے؟

تحریر: ملک شفقت اللہ کرتار  پور  راہداری منصوبے کا افتتاح ہو چکا ہے اور سکھ برادری کو  دربار تک رسائی کا موقع میسر آچکا ہے۔ عمران خان نے کرتار پور بارڈر کھولنے کا فیصلہ کیا تھا اور اس پر عمل بھی کیا۔ نوجوت سنگھ سدھو  ہمارے وزیرِ اعظم کے…

کسی طرح بھرم رہ جائے بس!

تحریر: سائرہ فاروق یوں تو میرا بنیادی موضوع غربت اور مختلف اشیا کی خریداری میں عوام کو ریلیف دینا ہے، مگر موسم کی مناسبت سے بات گرم کپڑوں اور لنڈا بازار سے شروع کررہی ہوں۔ خطِ غربت سے نیچے ہی نہیں خطِ غربت سے ذرا اوپر والے عوام بھی گرم…

سانپ اور بے موسم کے آم !

تحریر: نادیہ حسین چند روز پہلے ایک خبر نظر سے گزری کہ کراچی کے علاقے شاہ فیصل کالونی کے ایک پیٹرول پمپ پر سانپ نظر آیا جسے دیکھ کر وہاں موجود لوگ خوف زدہ ہو گئے اور ہر طرف کھلبلی مچ گئی۔ خیر، سانپ نے کسی کو ڈسا نہیں۔ ایدھی کا عملہ آیا اور…

آزادی مارچ اور دھرنے پر اخلاقی سوالات اٹھ گئے

یوسف ابوالخیر مولانا کا مارچ اور دھرنا اس وقت حالات حاضرہ کا اہم موضوع اور شہہ سُرخیوں میں ہے۔ خاکسار کے ذہن میں اس بابت چند سوالات کلبلا رہے ہیں جو تسلی بخش جواب چاہتے ہیں اور اس حوالے سے راہ نمائی کی غرض سے آپ کے سامنے رکھ رہا ہوں۔ سب…