The news is by your side.

سیلاب متاثرین کو ریسکیو کرنے والی کشتی حادثے کا شکار

صوبہ سندھ کے ضلع جامشورو میں سیلاب متاثرین کو لیجانے والی کشتی حادثے کا شکار ہوگئی ہے۔

پولیس ذرائع کے مطابق جامشورو کے علاقے بلاول پور کے مقام پر دریائے سندھ میں کشتی الٹ گئی، کشتی میں نشیبی علاقوں سے محفوظ مقام کی جانب جانے والے مسافر سوار تھے۔

پولیس کے مطابق واقعے کشتی میں کم وبیش 17 افراد سوار تھے، جن میں سے ایک بچے اور تین خواتین سمیت پانچ افراد ڈوب کر جاں بحق ہوگئے، جن کی لاشیں دریا سے نکال لی گئی ہے۔

واقعے کے بعد مقامی افراد نے سات افراد کو زندہ بچالیا، جنہیں طبی امداد کے لئے عبداللہ شاہ میڈیکل انسٹیٹیوٹ سیہون منتقل کردیا گیا ہے، جہاں انہیں طبی امداد دی جارہی ہیں۔

کمشنر جامشورو نے حادثے کی تصدیق کرتے ہوئے بتایا کہ دیگرڈوبنے والے افراد کی تلاش جاری ہے اور اس کے لئے پاک بحریہ سےبھی مدد طلب کرلی گئی ہے۔

دوسری جانب کراچی کی ملیر ندی میں کار ڈوبنے کے حادثے میں لاپتہ ڈرائیور کی لاش 12 روز بعد مل گئی۔

یہ بھی پڑھیں: حالیہ بارشوں نے ایک ہزار سے زائد افراد کو موت کی نیند سلا دیا

پولیس نے میڈیا کو بتایا کہ ڈرائیور عبدالرحمان کی لاش ندی کے قریب جھاڑیوں سے ملی، ڈرائیور کے اہلخانہ کو حیدرآباد میں اطلاع دے دی گئی ہے۔

خیال رہے ملیرندی میں ڈملوٹی کےمقام پر کار ندی میں بہہ گئی تھی ، گاڑی میں ایک ہی خاندان کے چھ افراد اور ایک ڈرائیور سوار تھا۔

حادثے کے بعد گھرکے سربراہ ذیشان انصاری ، ایک بچی اور تین بچوں کی لاشیں مل گئیں تھی جبکہ کئی دن کے ریسکیو آپریشن کے بعد حادثے میں لاپتہ خاتون کی لاش ملی تھی۔

Comments

یہ بھی پڑھیں