The news is by your side.

ملیر ندی میں گاڑی بہنے سے لاپتہ ہونے والے خاندان میں سے ایک بچے کی لاش مل گئی

کراچی : ملیر ندی میں گاڑی بہنے سے لاپتہ ہونے والے خاندان میں سے ایک بچے کی لاش مل گئی اوردیگر کی تلاش جاری ہے۔

تفصیلات کے مطابق کراچی کی ملیرندی میں گاڑی بہنے سے لاپتہ ہونے والے خاندان کی تلاش جاری ہے۔

امدادی ٹیموں کو جائے حادثہ سے 3 کلومیٹر دور ندی سے ایک بچےکی لاش مل گئی جبکہ دیگر کی تلاش جاری ہے۔

ڈی ایس پی گڈاپ اعظم بلوچ نے بتایا کہ بچے کی شناخت نہیں ہوسکی، صبح گاڑی مل گئی تھی۔

اعظم بلوچ کا کہنا تھا کہ خاندان حیدر آباد کا رہائشی تھا اور گزشتہ شام کاٹھور پل سے براستہ سپر ہائی وے حیدرآباد واپس جانا چاہتے تھے۔

ڈی ایس پی نے کہا میاں بیوی اور چار بچے شادی میں شرکت کے بعد کراچی سے واپس حیدر آباد جارہے تھے۔

ان کا کہنا تھا کہ کاٹھورپل زیرآب ہونے کے باعث پولیس نے ٹریفک کے لیے بند کردیا تھا، جس کے بعد ڈرائیور نے برساتی ریلے سے گاڑی کراس کرنے کی کوشش کی جس سے حادثہ ہوا۔

ڈوبنے والی فیملی کے رشتے دار محمد دانش کا کہنا ہے پانی کا بہاؤ تیز ہونے کی وجہ سے گاڑی ڈوب گئی، جس میں ڈرائیور کے علاوہ ماموں، ممانی اور 4 بچے سوار تھے۔

کار کے ڈرائیورکے بھائی حافظ عبدالحئی نے کہا میرا بھائی حیدرآباد آ رہا تھا کہ ایک فیملی نے کہا ہمیں بھی لے جائیں، قائد آباد سے خاندان کو لے کر بھائی حیدرآباد آرہا تھا، شام 6 بجے کے بعد دوبارہ رابطہ نہیں ہوا۔

یاد رہے گزشتہ رات ایک گاڑی بپھری ہوئی ملیر ندی کے بہاؤ کی زد میں آگئی تھی ، جس میں 7 افراد سوار تھے۔

جس کے بعد ریسکیو اداروں نے ندی میں ڈوبنے والی سفید کار تلاش کر لی تھی تاہم گاڑی میں کسی شخص کی لاش موجود نہیں تھی۔

Comments

یہ بھی پڑھیں