کینسر سے لڑنے والے بالی ووڈ اداکارعرفان خان کی دو ماہ بعد واپسی
The news is by your side.

Advertisement

کینسر سے لڑنے والے بالی ووڈ اداکار عرفان خان کی دو ماہ بعد واپسی

عرفان خان لندن میں زیر علاج ہیں اور وہ گزشتہ دو ماہ سے بالکل خاموش تھے

ممبئی: کینسر کے موذی مرض میں مبتلا عرفان خان ایک بار پھر منظر عام پر آگئے انہوں نے سماجی رابطے کی ویب سائٹ پر اپنی نئی آنے والی فلم کا پوسٹر جاری کردیا۔

تفصیلات کے مطابق گزشتہ ماہ اداکار عرفان خان نے سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹویٹر پر خدشہ ظاہر کیا تھا کہ کبھی کبھی آپ کے دن کا آغاز ایسے انوکھے واقعات کے ساتھ ہوتا ہے جو آپ کو زندگی کو ہلا کر رکھ دیتا ہے، گزشتہ 15 دن سے میرے اوپر یہی کیفیت طاری ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ نایاب کہانیوں کی تلاش مجھے اچھوتی بیماری کی طرف لے جائے گی اس بات کا بالکل علم نہیں تھا تاہم اب جب مرض لاحق ہونے کی تصدیق ہوچکی تب بھی میں نے شکست تسلیم نہیں کی۔

مزید پڑھیں: عرفان خان کو دماغ کے کینسر کی تشخیص

عرفان خان نے بتایا تھا کہ انہوں نے مرض کی تشخیص کے لیے ٹیسٹ کروائے ہیں جن کی رپورٹس کا انتظار ہے، رپورٹ سامنے آنے پر بالی ووڈ اداکار خود، انڈسٹری اور مداح حیران رہ گئے تھے کیونکہ ان میں بتایا گیا تھا کہ عرفان خان سرطان کے مرض میں مبتلا ہوچکے۔

بعد ازاں اداکار نے سماجی رابطے کی ویب سائٹ پر اپنی بیماری کی تصدقی کرتے ہوئے بتایا تھا کہ انہیں دماغ کے کینسر (نیورو انڈکرائن) کے مرض کی تشخیص ہوئی جو کہ انتہائی پیچیدہ مرض ہے لیکن وہ اپنے چاہنے والوں کی محبت اور دعاؤں کی بدولت پر امید ہیں کہ موذی مرض سے جان چھڑا لیں گے۔

یہ بھی پڑھیں: عرفان خان کی بگڑتی ہوئی صحت سے متعلق خبروں میں کوئی صداقت نہیں

عرفان خان اس وقت لندن میں زیر علاج ہیں اور وہ گزشتہ دو ماہ سے اسکرین سے بالکل غائب تھے تاہم ایک بار انہوں نے طویل وقفے کے بعد سماجی رابطے کی ویب سائٹ پر اپنی نئی آنے والی فلم ’کارروان‘ کا پوسٹر جاری کیا جو رواں برس 10 اگست کو سینیما گھروں میں ریلیز کی جائے گی۔

 انہوں نے فلم میں کام کرنے والے اداکار اور اداکارہ کے لیے نیک خواہشات کا بھی اظہار کیا۔ عرفان خان کی اچانک واپسی پر مداح اور ساتھی فنکار بہت خوش ہیں اور انہوں نے اداکار کی جلد صحت یابی کے لیے دعا بھی کی۔


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں، مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہچانے کے لیے سوشل میڈیا پر شیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں