برطانوی نائب وزیراعظم ڈیمیئن گرین عہدے سے مستعفی -
The news is by your side.

Advertisement

برطانوی نائب وزیراعظم ڈیمیئن گرین عہدے سے مستعفی

لندن: برطانیہ کے نائب وزیراعظم ڈیمیئن گرین نے اپنے عہدے سے استعفیٰ دے دیا ہے، وزیر اعظم تھریسا مے نے ان کا استعفیٰ قبول کرلیا۔

تفصیلات کے مطابق کمپیوٹر سے غیراخلاقی مواد برآمد ہونے کے اسکینڈل میں ملوث برطانوی نائب وزیراعظم ڈیمیئن گرین نے اپنے عہدے سے استعفیٰ دے دیا۔

برطانوی میڈیا کےمطابق ڈیمیئن گرین نے اپنا عہدہ باضابطہ طور پر وزیراعظم تھریسا مے کو پیش کردیا۔

ڈیمیئن گرین پر اپنے پارلیمانی دفتر کے کمپیوٹر پر غیراخلاقی مواد دیکھنے اور فحش تبصرے کرنے کا الزام تھا جبکہ وہ تحقیقاتی ٹیم کو اپنے اس فعل پر کوئی بھی تسلی بخش وضاحت دینے میں ناکام رہے تھے۔

برطانوی وزیراعظم تھریسا مے کی درخواست پر 61 سالہ ڈیمیئن گرین اپنے عہدے سے مستعفی ہوگئے۔

خیال رہے کہ 2 نومبر2017 کو خاتون کو جنسی طور پر ہراساں کرنے کے الزام کے بعد برطانوی وزیردفاع مائیکل فلن نے عہدے سے استعفیٰ دے دیا تھا۔


آسٹریا کے اپوزیشن لیڈر جنسی استحصال کے الزام پرمستعفی


یاد رہے کہ رواں برس 6 نومبر 2017 کوآسٹریا کے اپوزیشن لیڈر پیٹر پلس نے جنسی استحصال کے الزام پر اپنی پارلیمانی نشست سے استعفیٰ دے دیا تھا۔


اگر آپ کو یہ خبر پسند نہیں آئی تو برائے مہربانی نیچے کمنٹس میں اپنی رائے کا اظہار کریں اور اگر آپ کو یہ مضمون پسند آیا ہے تو اسے اپنی فیس بک وال پر شیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں